Thursday , August 17 2017
Home / Top Stories / ’’مودی کمزور ترین وزیراعظم، سوشیل میڈیا پر تبصرے‘‘

’’مودی کمزور ترین وزیراعظم، سوشیل میڈیا پر تبصرے‘‘

نئی دہلی ۔ 2 مئی (سیاست ڈاٹ کام) جموں و کشمیر میں دو ہندوستانی فوجیوں کی مسخ کردہ نعش برآمد ہونے کے بعد مرکزی حکومت پر سخت جوابی کارروائی کے لیے زور ڈالا جا رہا ہے۔سوشل میڈیا پر منگل کی صبح سے ہی وزیر اعظم نریندر مودی کو ‘ملک کے آج تک کے سب سے کمزور وزیر اعظم’ کے نام کا ہیش ٹیگ ModiWeakestPMever# گشت کر رہا ہے۔لوگ اس ہیش ٹیگ کے ساتھ فوجیوں کی لاشوں کے ساتھ کی جانے والی بدسلوکیوں پر اپنے غصے کا اظہار کر رہے ہیں۔ایک صارف سیمی آہوجا کے نام سے لکھتی ہیں: ‘ہاں، بدقسمتی سے مسٹر وزیراعظم، آپ سب سے کمزور وزیر اعظم ہیںایک دوسرے صارف سنیل باروپل نے نریندر مودی کا ہندوستان کی سابق وزیر اعظم اندرا گاندھی سے مقابلہ کرتے ہوئے لکھا: ‘بیشک مودی نے انڈیا کی ترقی کے لیے پالیسیاں بنائیں، لیکن قومی سلامتی کے محاذ پر اندرا گاندھی بہتر تھیں۔’ایک صارف شوم نے ٹویٹ کیا: ‘وزیر اعظم صرف ہوائی قلعہ بنا رہے ہیں۔ مودی ایک کمزور وزیر اعظم ہیں اور انڈیا کے لیے شرم کا باعث ہیں۔’دریں اثنا انڈیا کی جانب سے ماضی میں کی جانے والی مبینہ ‘سرجیکل اسٹرائیکس’ کے حوالے سے لوگ منقسم نظر آیا۔ انشومن ڈانڈا لکھتے ہیں: ‘ہمارے شہیدوں کی لاشوں کی بے حرمتی کی جا رہی اور ہم اب بھی سرجیکل اسٹرائیکس کا راگ الاپ رہے ہیں، اس سے کچھ نہیں ہوتا۔’اس کے علاوہ وزیر اعظم اور بی جے پی لیڈروں کے پرانے ٹویٹس اور بیانات کو بھی شیئر کیا جا رہا جن میں انھوں نے فوجی جوانوں کے ساتھ ہونے والی مبینہ بربریت پر اس وقت کی یو پی اے حکومت کی سخت تنقید کا نشانہ بنایا تھا۔نریندر مودی کے سنہ 2013 کے کئی ٹویٹس گشت کر رہے ہیں جس میں انھوں نے سرحد پر رونما ہونے والے واقعات پر اس وقت کی کانگریس حکومت کو سخت تنقید کا نشانہ بنایا تھا۔ایک صارف نے بی جے پی رہنما اور وزیرخارجہ سشما سوراج کے 6اگست 2013 کے ایک ٹویٹ کے ساتھ لکھا: ‘کیا آپ اسے پھر سے ٹویٹ کر سکتی ہیں کیونکہ یہ آج بھی بہت ہی موزوں ہے۔

TOPPOPULARRECENT