Wednesday , August 23 2017
Home / ہندوستان / مودی کے دورہ ٔگورکھپور سے قبل ہند۔ نیپال سرحد پر چوکسی

مودی کے دورہ ٔگورکھپور سے قبل ہند۔ نیپال سرحد پر چوکسی

مہاراج گنج۔/19جولائی، ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیر اعظم نریندر مودی کا 22جولائی کو ریاست یو پی کے ضلع گورکھپور کے دورہ سے قبل ہند۔ نیپال سرحد پر سخت چوکسی کے احکام جاری کردیئے گئے ہیں اور اس حوالہ سے یو پی پولیس اورسشترسیما بل نے مشترکہ طور پر ہند۔ نیپال سرحد جو کہ گورکھپور بستی ڈیویژن کے تحت آتا ہے پر اپنی سخت چوکسی شروع کردی ہے۔ مذکورہ دورہ کے دوران توقع ہے کہ مسٹر مودی اس موقع پر فرٹیلائزر فیکٹری کا احیاء کریں گے اور اسی علاقہ میں آل انڈیا انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنس (AIIMS) کا سنگ بنیاد رکھیں گے لہٰذا اس موقع پر کسی بھی ممکنہ دہشت گردانہ کارروائیوں سے تحفظ کیلئے سیکورٹی ایجنسیوں نے متعلقہ سیکورٹی ایجنسیوں کو چوکسی برتنے کی ہدایت دی ہے۔ گورکھپور آئی جی موہیت اگروال نے آج یہ بات بتائی۔ انہوں نے کہا کہ سیکورٹی ایجنسیوں کی جانب سے ہند۔ نیپال سرحد پر سخت چوکسی اختیار کرنے کی ہدایت دی گئی ہے تاکہ وزیر اعظم کے دورہ کے دوران کسی بھی قسم کے غیر سماجی عناصر اور ممکنہ دہشت گردانہ کارروائیوں سے تحفظ فراہم کیا جاسکے۔ ایک سینئر ایس ایس بی عہدیدار نے یہ بات بتائی کہ سرحد کے قریب تمام حساس علاقوں میں چیکنگ اور تلاشی کی کارروائی بڑھادی گئی ہے تاکہ قوم دشمن عناصر سے نمٹا جاسکے۔ انہوں نے تمام سیکورٹی گارڈز اور پولیس عہدیداروں سے سرحد عبور کرنے والے افراد کی سختی کے ساتھ جانچ کرنے کی ہدایت دی ہے۔
کیرالا سے لاپتہ افراد کا حشر نامعلوم ؟
نئی دہلی ۔ 19 جولائی (سیاست ڈاٹ کام ) لوک سبھا میں کیرالا کے ارکان نے آج اپنی ریاست کے 21 لوگوں کا مسئلہ اٹھایا جو لاپتہ ہوگئے ہیں اور شبہ کیا جاتا ہیکہ ان کے دہشت گرد گروپ آئی ایس سے روابط قائم ہیں۔ ارکان لوک سبھا نے حکومت سے تصدیق چاہی کہ آیا یہ لوگ کسی ممنوعہ تنظیم میں شامل ہوگئے ہیں؟ کے سی وینو گوپال (کانگریس) نے کہا کہ بعض غیرمصدقہ میڈیا رپورٹس آئی ہیں کہ یہ لوگ کسی دہشت گرد تنظیم میں شامل ہوچکے ہیں۔ اس کی تصدیق صرف مرکزی تحقیقاتی ادارہ یعنی این آئی اے ہی کرسکتا ہے۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ لوگوں میں ’’اسلاموفوبیا‘‘ پھیلانے کی دانستہ کوشش ہورہی ہے اور کہا کہ ملک کی تمام مسلم تنظیموں اور بااثر علماء نے آئی ایس کے کٹر پسند نظریہ کو تنقید کے ساتھ مسترد کردیا ۔

TOPPOPULARRECENT