Wednesday , August 23 2017
Home / اضلاع کی خبریں / مولانا آزاد یوم پیدائش تقریب میں قائدین کی برہمی

مولانا آزاد یوم پیدائش تقریب میں قائدین کی برہمی

نلگنڈہ میں وزراء کی عدم دلچسپی اختتام سے قبل واپسی
نلگنڈہ /11 نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) اقلیتی بہبود کی تقاریب میں مہمان خصوصی کی واپسی پر قائدین نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے سخت احتجاج کیا ۔ جس کی وجہ یوم اقلیتی بہبود کی تقریب میں افراتفری پیدا ہوگئی ۔ مجاہد آزادی و ملک پہلے وزیر تعلیم مولانا ابوالکلام آزاد کی یوم پیدائش کی سالگرہ کے موقع پر سرکاری سطح پر یوم اقلیتی بہبود منانے کی ہدایت پر آج ضلع نظم و نسق کی جانب سے اسٹار فنکشن ہال میں تقریب کا اہتمام کیا گیا ۔ جس میں ریاستی وزیر برقی مسٹر جی جگدیش ریڈی رکن پارلیمنٹ نلگنڈہ مسٹر جی سکھیندر ریڈی ضلع پریشد صدرنشین مسٹر بابو نائیک اور ضلع کلکٹر انچارج مسٹر ستیہ نارائنہ ریڈی نے بحیثیت مہمان خصوصی مخاطب کرتے ہوئے فوری تقریب سے واپس ہو رہے تھے کہ ضلع اقلیتی قائدین جناب احمد کلیم بلدی فلور لیڈر ڈاکٹر محمد عبدالحفیظ خان و دیگر نے تقریب سے اعلی قائدین و عہدیداروں کے چلے جانے سے مسائل کی سماعت اور یکسوئی اور اقلیتوں کے پروگرام سے عدم دلچسپی پر سخت احتجاج کیا ۔ جس کی وجہ پرامن منعقدہ پروگرام میں افراتفری کا ماحول پیدا ہوگیا ۔ تمام قائدین بطور احتجاج پروگرام کا بائیکاٹ کردیا ۔ بعد ازیں ٹی آر ایس اقلیتی قئادین ایڈیشنل جوائنٹ کلکٹر وینکٹ راؤ آر ڈی او وینکٹ چاری نے پروگرام کو آگے لایا ۔ قبل ازیں ریاستی وزیر برقی مسٹر جگدیش ریڈی نے مجاہد آزادی مولانا آزاد کو بھرپور خراج عقیدت پیش کیا اور کہا کہ ملک کی آزادی میں مجاہد آزادی کے بھرپور تائید نے بڑی آزمائیشوں سے جدوجہد کی اور تحریک آزادی میں حصہ لیا اور ملک میں آزاد کروایا ۔ انہو ںنے بتایا کہ ملک کے پہلے وزیر تعلیم کی پالیسیوں پر آج تک عمل کیا جارہا ہے ۔ ان کی جانب سے مرتب کردہ پالیسیوں سے ہی ملک میں آج خواندگی میں اضافہ اور عصری علوم کو حاصل کیا جارہا ہے ۔ رکن پارلیمنٹ نلگنڈہ جی سکھیندر ریڈی نے اقلیتوں کی فلاح و بہبود کیلئے ریاستی حکومت سنجیدہ اقدامات کر رہی ہے ۔ انہوں نے حکومت پر زور دیا کہ مسلمانوں کی پسمادنگی دور کرنے کے فوری اقدامات کئے جائیں ۔ ضلع کلکٹر انچارج ستیہ نارائنہ ریڈی نے حکومت کی جانب سے روبہ عمل لائی جانے والی اسکیموں سے استفادہ کرنے کی خواہش کی ۔ بابو نائیک صدرنشین ضلع پریشد نے بتایا کہ ریاستی حکومت اقلیتوں اور گریجنوں کو تعلیمی میدان میں آگے بڑھانے کیلئے اقلیتی اقامتی مدارس کا قیام عمل میں لایا ہے ۔ پروگرام میں سال گذشتہ دسویں جماعت میں امتیازی نشانات حاصل کرنے والے طالبات اور طلبہ کو توصیف نامہ تقسیم کئے گئے ۔ مولانا سید احسان الدین قاسمی ، مولانا عبدالبصیر قاسمی کے علاوہ صحیفہ نگاروں اور دیگر کو توصیف نامے دئیے گئے اور جلسے کی کارروائی ڈاکٹر اے اے خان نے کی ۔

TOPPOPULARRECENT