Monday , September 25 2017
Home / شہر کی خبریں / مویشیوں کے تاجرین پر خود ساختہ گاؤ رکھشکوں کے مظالم کی شکایت

مویشیوں کے تاجرین پر خود ساختہ گاؤ رکھشکوں کے مظالم کی شکایت

اضلاع میں غنڈہ گردی، بی جے پی قائدین بھی شامل، وزیرداخلہ کو عزیزپاشاہ کی یادداشت

حیدرآباد۔20جون(سیاست نیوز) کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا کی قومی عاملہ کے رکن وسابق رکن پارلیمنٹ راجیہ سبھا جناب سید عزیز پاشاہ کی قیادت میںضلع محبو ب نگر کے ایک وفد نے ریاستی وزیرداخلہ این نرسمہا ریڈی سے ملاقات کرتے ہوئے انہیںمذکورہ ضلع میں خودساختہ گائو رکشکوں اور بی جے پی کے مقامی قائدین کے مویشیوں کے تاجرین پر ڈھائے جانے والے مظالم سے واقف کروایا۔اس موقع پر ان کے ہمراہ کل ہند کسان سبھا کی صدر شریمتی پی پدما ‘ کے راما کرشنا‘ حنیف محمد اور دیگربھی وفد میںشامل تھے۔ جناب سید عزیز پاشاہ نے کہاکہ صدقت ناموں کی موجود گی کے باوجود ضلع محبو ب نگر اور اطراف واکناف کے علاقوں میں مویشیوں کی خریدی کرنے والے تاجرین کو خودساختہ گائو رکشکوں کی زیادتیوں کا سامنا کرنا پڑرہا ہے ۔ جناب سید عزیز پاشاہ نے کہاکہ مجبور اورلاچار تاجرین پر حملے کئے جارہے ہیں اور ان کی رقومات چھین کر ڈاکٹرس کی رضامندی کے بعد خریدی گئے مویشیوں کو چھوڑ کر لے جایا جارہا ہے۔ جناب سید عزیز پاشاہ نے ریاستی وزیرداخلہ کو اس بات سے بھی واقف کروایا کہ ضلع محبو ب نگر اور اطراف اکناف میں مویشیوں کے تاجرین پر ڈھائے جانے والے مظالم کے متعلق مقامی پولیس اسٹیشنوں اور متعلقہ ایس پی کو بھی واقف کروایا گیا ہے مگر اس پر ابھی تک کسی قسم کی کوئی کاروائی نہیں کی گئی۔ جناب سید عزیز پاشاہ نے کہاکہ مرکزی حکومت کی جانب سے جانوروں کے ذبیحہ کے متعلق قانون نافذ کیاگیا ہے تب سے ریاست بھر میںخودساختہ گائو رکشک اور بی جے پی کے کارکن کافی سرگرم ہوگئے ہیں۔ انہوں نے ریاستی وزیرداخلہ این نرسمہا ریڈی سے کہاکہ اگر حکومت تلنگانہ گائو رکشکوں پر کنٹرول میں کوتاہی برتے گی تو ریاست کے میںنفرت ماحول پھیلے گا اور ریاست کے نظم و نسق کے لئے نقصاندہ ثابت ہوگا۔ ریاستی وزیر داخلہ نے اس پر فوری کروائی کرتے ہوئے تلنگانہ ڈی جی پی مسٹر انوراگ شرما سے اس ضمن میںبات کی اور وفد کو ڈی جی پی تلنگانہ سے ملاقات کرنے کو کہا۔ بعدازاں عزیز پاشاہ کی قیادت میںوفد نے ڈی جی پی انوراگ شرما سے بھی ملاقات کی‘ جس کے بعد مسٹر انوراگ شرما نے ضلع محبو ب نگر کے ایس پی کو ہدایت دی کی وہ مذکورہ شکایت پر کاروائی کرتے ہوئے امن کو درہم برہم کرنے کی کوشش کرنے والوں کے خلاف سخت کاروائی کریں۔

TOPPOPULARRECENT