Thursday , August 17 2017
Home / Top Stories / مکہ معظمہ کی ہوٹل میں آتشزدگی ، 2 زخمی

مکہ معظمہ کی ہوٹل میں آتشزدگی ، 2 زخمی

۔1000 ایشیائی عازمین حج کا تخلیہ ، مناسک حج کو محفوظ بنانے سعودی سیول ڈیفنس فورس سرگرم

مکہ معظمہ ۔ 17 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) تقریباً 1000 ایشیائی عازمین حج کا آج علی الصبح ان کی ہوٹل سے تخلیہ کروادیا گیا کیونکہ اس میں آگ بھڑک اٹھی تھی جس کی وجہ سے دو افراد زخمی ہوگئے۔ شہری حفاظت کے محکمہ کے بموجب آتش فرو عملہ نے دو عازمین حج کو جو ہوٹل کی آٹھویں منزل پر آتشزدگی کے حادثہ میں زخمی ہوگئے تھے، بچا لیا۔ ہوٹل کانا اور عازمین حج کی قومیت کا انکشاف نہیں کیا گیا۔ سیول ڈیفنس ایجنسی نے بتایا کہ آتش فرو عملہ نے ہوٹل کی آخری منزل سے عازمین حج کو محفوظ نکالتے ہوئے جھلس جانے والے دو عازمین کو فوری دواخانہ منتقل کیا ۔ اس سال حج کے موقع پر 30 لاکھ سے زائد مسلمانوں کی آمد متوقع ہے ۔ ایجنسی آگ لگنے کی وجوہات کا پتہ چلارہی ہے ۔ گزشتہ دنوں حرم شریف میں کرین حادثہ کے دوران 107 عازمین حج شہید ہوئے تھے اس سانحہ کے بعد مکہ معظمہ کے ہوٹل میں آگ لگنے کے واقعہ سے سراسیمگی پھیل گئی ہے ۔ سیول ڈیفنس فورسس کے کمانڈرس نے حج کے دوران عازمین کی حفاظت کیلئے ہرممکنہ کوشش شروع کی ہے ۔ ان کمانڈرس نے ولی عہد شہزادہ محمد بن نائف کے دورہ اور حج انتظامات کا جائزہ لینے کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا کہ مکہ معظمہ اور دیگر مقدس مقامات پر حج انتظامات و تیاریوں کا جائزہ لیا جارہا ہے ۔  حج سیول ڈیفنس فورسیس کے کمانڈر میجر جنرل حماد المبادل نے کہا کہ خادم حرمین شریفین نے عازمین حج کی سلامتی کو یقینی بنانے کیلئے اولین ترجیح دی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT