Thursday , September 21 2017
Home / خواتین کا صفحہ / مہندی :حسن کو چار چاند لگادیتی ہے

مہندی :حسن کو چار چاند لگادیتی ہے

مہندی حسن کو چار چاند لگادیتی ہے ۔ عورت کا اصل زیور تو اس کی شرم و حیاء ہے ، اس کا حسن ، اس کی پُرکشش شخصیت اور ان کا دیدہ زیب ملبوسات ہی ان کا زیور ہے ، مہندی اور زیورات کے سج دھج سے حسن اور بھی نکھرتا ہی جائیگا ۔

پُرکشش آنکھیں بھی کسی زیورات سے کم نہیں ہوتی … پُرکشش وفاپرست خوبصورتی کو کسی سنگھار کی اور نہ میک اپ کی ضرورت ہی نہیں ، ہمارے یہاں کسی تقریب ہو یا شادی بیاہ ہو عورت زیورات کے ساتھ ساتھ مہندی کے بغیر نامکمل نظر آتی ہیں ، یہ بات الگ ہے کہ ہر دور میں نئے نئے انداز فیشن میں مہندی کے نئے نئے ڈیزائن بدلتے رہتے ہیں ، زمانے کا کوئی بھی خطہ ایسا نہیں جہاں عورت کے حسن و دلکشی میں اضاف کیلئے مہندی کا استعمال نہ کیا ہو ۔ زمانے قدیم سے مہندی لگانے کا رواج چلتا آرہا ہے مہندی کے بغیر دلہن کا سنگھار ادھورا لگتا ہے ، دلہن کو ان کی سکھیاں ہاتھوں اور پیروں میں طرح طرح کے مہندی کے ڈیزائن اُتارتے نظر آتے ہیں ، ہاتھوں اور پیروں میں مہندی کے خوشنما ڈیزائن دیکھ کر ایسا محسوس ہوتا ہے جیسے دیکھ کر پوری کائنات مہک اُٹھی ہو ۔ اگر آپ کسی تقریب میں جارہے ہوں تو سب سے پہلے اپنے ہاتھوں اور پیروں میں خوشنما ڈیزائن مہندی لگانا نہ بھولیں ۔ عورت کیلئے سنگھار ضروری ہے مہندی کے بغیر سنگھار ادھورا لگتا ہے ۔
رشید شوق ۔ بانسواڑہ

TOPPOPULARRECENT