Tuesday , October 24 2017
Home / شہر کی خبریں / نئی نسل میں اردو زبان کا فروغ، تابناک مستقبل کی ضمانت

نئی نسل میں اردو زبان کا فروغ، تابناک مستقبل کی ضمانت

اردو امتحانات کے اسناد کی تقسیم، جناب سید طارق قادری و دیگر کا خطاب
حیدرآباد۔9اگست(سیاست نیوز) عابد علی خان ایجوکیشنل ٹرسٹ کے زیر اہتمام اور ادارہ ادبیات اردو کی جانب سے منعقدہ اُردو دانی‘ زبان دانی انشاء امتحانات میں کامیابی حاصل کرنے والی مدرسہ دینیہ رحمانیہ دبیر پورہ کی طالبات میں اسناد کی تقسیم عمل میں لائی گئی۔ صدرنشین ایچ اے ایس انڈیا وجنرل سکریٹری صوفی اکیڈیمی مولانا سیدطار ق قادری ‘ سینئر کانگریس قائد جناب خلیق الرحمن‘ ممتا ز این آر ائی جناب عبدالحنان واجد‘ مولانا الحاج محمد عظیم الدین کے علاوہ خازن مدرسہ جناب ایم اے باسط ‘ جناب خلیل نے اس موقع پر طلبہ کی ہمت افزائی کرتے ہوئے اُردو کی ترقی وترویج میں مدیر اعلی روزنامہ سیاست جناب زاہد علی خان کی نگرانی میں ادارہ ادبیات اُردو کی کارکردگی پر مسرت کا اظہار کیا۔مولانا سید طار ق قادری نے خطاب کرتے ہوئے نئی نسل میں اُردو کے فروغ کے لئے ادارہ سیاست اور ادبیات اُردو کی کاوشوں کی سراہنا کی۔انہوں نے کہاکہ نئی نسل میںاُردو کا فروغ اُردو زبان کے تابناک مستقبل کی ضمانت ہوگا۔مولانا سید طار ق قادری نے تعلیم کے میدان میں مسلمانوں کی پسماندگی کا ذکر کرتے ہوئے کہاکہ مذہب اسلام میں تعلیم حاصل کرنے کی سختی کے ساتھ تاکید کی گئی ہے باوجود اس کے مسلمان تعلیم کے میدان میں دیگر اقوام سے پچھڑے ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ دینی او رعصری علوم پر عبور حاصل
کرنے والوں کو دنیا میں عزت واکرام سے نوازا جاتا ہے۔ مولانا نے اُردو دانی ‘ زبان دانی اور انشاء کی سند حاصل کرنے والی طالبات سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ وہ عالم اور فاضل کے امتحانات میں بھی حصہ لیں اور اُردو ذریعہ تعلیم سے ڈگری اورپوسٹ گریجویٹ کی بھی تعلیم حاصل کریں تاکہ مستقبل میں انہیں اس علم سے آنے والی نسلوں کو سیر اب کرنے کا موقع مل سکے۔جناب خلیق الرحمن نے مدرسوں کو نشانہ بنانے والوں پر سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ دنیا میں امن اور جذبہ ایثار وقربانی کی تعلیم کو عام کرنے میں ان مدرسوں نے اہم رول ادا کیا ہے جو آج فرقہ پرست عناصر کی تنقیدوں کا شکار ہیں۔خلیق الرحمن نے کہاکہ ایک لڑکی یا عورت کا تعلیم یافتہ ہونا گویا ایک خاندان کا تعلیم یافتہ ہونے کے برابر ہے۔ انہوں نے عورت کی گود کو بچوں کی پہلی درس گاہ قراردیا ۔ جنرل سکریٹری مدرسہ ایم اے ذیشان نے مدرسہ کی پچیس سالہ کارکردگی پر روشنی ڈالی۔

TOPPOPULARRECENT