Wednesday , August 23 2017
Home / شہر کی خبریں / نئے اضلاع کے قیام کے فیصلہ سے رئیل اسٹیٹ میں نئی جان

نئے اضلاع کے قیام کے فیصلہ سے رئیل اسٹیٹ میں نئی جان

حیدرآباد۔ 22 مئی (سیاست نیوز) چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ کے اس سال یوم آزادی سے قبل 14 نئے اضلاع قائم کرنے کے فیصلہ سے تلنگانہ میں رئیل اسٹیٹ کاروبار میں نیا جوش و خروش پیدا ہوا ہے۔ بیشتر رئیل اسٹیٹ کمپنیاں مجوزہ ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرس میں نئے ہاؤزنگ وینچرس شروع  کرنے میں مصروف ہیں۔ سرمایہ کار مختصر وقت میں زائد فائدہ حاصل کرنے کے یقین کے ساتھ اراضی کی خریدی کے لئے سرمایہ کاری کررہے ہیں۔ اپریل کی بہ نسبت مئی
میں رجسٹریشن کی تعداد میں 30% اضافہ ہوا ہے۔ ریاست کے تقریباً تمام اضلاع میں زمینات کی خرید و فروخت میں اضافہ ہوا ہے۔ حکومت نے اشارہ دیا ہے کہ ضلع نلگنڈہ میں سوریاپیٹ اور بھونگیر، ضلع محبوب نگر میں ناگر کرنول اور ونپرتی ضلع کھمم میں کوتہ گوڑم یا بھدراچلم، ضلع ورنگل میں جنگاؤں اور بھوپال پلی ضلع کریم نگر میں جگتیال اور ضلع عادل آباد میں منچریال کو نیا ضلع بنایا جائے گا۔ حکومت نے اس سال رجسٹریشن ڈپارٹمنٹ سے 4 ہزار 318 کروڑ روپئے آمدنی کا نشانہ مقرر کیا ہے۔ سال 2015ء میں اس محکمہ کو 3 ہزار 420 کروڑ روپئے کی آمدنی ہوئی تھی۔

TOPPOPULARRECENT