Sunday , September 24 2017
Home / شہر کی خبریں / نئے سکریٹریٹ کی تعمیر کے خلاف شاہ علی بنڈہ تا چارمینار ریالی

نئے سکریٹریٹ کی تعمیر کے خلاف شاہ علی بنڈہ تا چارمینار ریالی

بیالٹ رائے دہی کی تیاری ، وی ہنمنت راؤ و دیگر قائدین کی شرکت
حیدرآباد ۔ 13 ۔ ستمبر : ( سیاست نیوز ) : سکریٹری اے آئی سی سی و سابق رکن راجیہ سبھا وی ہنمنت راؤ نے آج شاہ علی بنڈہ سے چارمینار تک ریالی منظم کرتے ہوئے نیا سکریٹریٹ تعمیر کرنے کی مخالفت کی ۔ 27 ستمبر کو شہر کے 15 مقامات پر بیالٹ باکس کے ذریعہ رائے دہی سے عوامی رائے حاصل کرنے کا اعلان کیا ۔ ریالی میں تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کے جنرل سکریٹری بلوکشن ، ترجمان جی نرنجن سابق کارپوریٹر محمد غوث کانگریس کے قائد موسیٰ قاسم کے علاوہ دوسرے قائدین موجود تھے ۔ ہنمنت راؤ نے عوام سے ملاقات کرتے ہوئے نئے سکریٹریٹ کی تعمیر کے بارے میں ان کی رائے حاصل کی ۔ بعد ازاں گاندھی بھون میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کے سی آر اپنے آپ کو شاہجہاں سمجھنے کی غلطی کررہے ہیں ۔ شاہجہاں شاہی حکمران تھے جنہوں نے اپنی محبوبہ کے لیے تاج محل تعمیر کرایاتھا جبکہ کے سی آر عوامی منتخب نمائندہ ہیں انہوں نے کہا کہ جو چیف منسٹر موجودہ سکریٹریٹ نہیں پہونچتا اس کو نئے سکریٹریٹ کی ضرورت کیا ہے ۔ چیف منسٹر نے پہلے ہی 300 کروڑ روپئے عوامی فنڈز خرچ کرتے ہوئے اپنے لیے پرگتی بھون تعمیر کرایا ہے ۔ جس میں عوامی قائدین اور غریب و ضرورت مندوں کا داخلہ ممنوع ہے ۔ مزید 300 کروڑ روپئے خرچ کرتے ہوئے سکندرآباد کے بیسن پولو گراونڈ پر نیا سکریٹریٹ تعمیر کرنے کی ضرورت کیا ہے وہ اس مسئلہ پر سکندرآباد اور چارمینار کے علاقوں میں عوامی رائے حاصل کرچکے ہیں، صد فیصد عوام نئے سکریٹریٹ کے نام پر عوامی فنڈز کا بیجا استعمال کرنے کے خلاف ہیں ۔ تمام سیاسی جماعتیں نیا سکریٹریٹ تعمیر کرنے کی مخالفت کررہی ہیں ۔ ہنمنت راؤ نے کہا کہ موجودہ سکریٹریٹ حضور نظام کی حکمرانی اور متحدہ آندھرا پردیش کے لیے کارآمد ہوسکتاہے تو تلنگانہ حکومت کے لیے بے فیض کیسے ثابت ہوسکتا ہے ۔ کانگریس نئے سکریٹریٹ کی تعمیر کے خلاف مسلسل جدوجہد کررہی ہے ۔ مگر چیف منسٹر کے سی آر نے اس پر ابھی تک اپنے ردعمل کا اظہار نہیں کیا ہے ۔ اس مسئلہ پر وہ 27 ستمبر کو دونوں شہروں حیدرآباد و سکندرآباد کے تقریبا 15 مقامات پر صبح 10 تا 5 بجے شام بیالٹ باکس کے ذریعہ عوامی رائے حاصل کرنے کا انتظام کریں گے ۔۔

TOPPOPULARRECENT