Thursday , September 21 2017
Home / شہر کی خبریں / نائب صدر جمہوریہ ہند کے لیے وینکیا نائیڈو موزوں امیدوار

نائب صدر جمہوریہ ہند کے لیے وینکیا نائیڈو موزوں امیدوار

اہم جماعتوں کے ایم پیز کی نیک تمنائیں ، تلنگانہ سے کے کویتا کی قیادت میں وفد کی ملاقات
حیدرآباد ۔ 3 ۔ اگست (سیاست نیوز) ملک کے نائب صدر جمہوریہ کے عہدہ کیلئے انتخابات سے عین قبل تلنگانہ اور آندھراپردیش کی تمام اہم جماعتوں کے ارکان پارلیمنٹ نے آج نئی دہلی میں این ڈی اے امیدوار ایم وینکیا نائیڈو سے ملاقات کی ۔ ٹی آر ایس ، تلگو دیشم ، وائی ایس آر کانگریس اور بی جے پی کے ارکان پارلیمنٹ نے وینکیا نائیڈو سے ان کی قیامگاہ پر ملاقات کرتے ہوئے نیک تمناؤں کا اظہار کیا۔ ان پارٹیوں نے انتخابات میں تائید کا یقین دلاتے ہوئے کہا وینکیا نائیڈو کو بھاری اکثریت حاصل ہوگی۔ ٹی آر ایس کے ارکان پارلیمنٹ نے کویتا کی قیادت میں ملاقات کی جبکہ تلگو دیشم کے ارکان کی قیادت مرکزی وزیر شہری ہوا بازی اشوک گجپتی راجو نے کی ۔ وائی ایس آر کانگریس ارکان پارلیمنٹ کے وفد کی قیادت رام موہن ریڈی کر رہے تھے۔ ان تمام جماعتوں نے وینکیا نائیڈو کی تائید کا پہلے ہی اعلان کردیا ہے، بعد میں میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کویتا نے کہا کہ نائب صدر جمہوریہ کے عہدہ کیلئے وینکیا نائیڈو موزوں امیدوار ہیں ۔ لہذا پارٹی نے ان کی تائید کا فیصلہ کیا ہے ۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ وینکیا نائیڈو کو بھاری اکثریت حاصل ہوگی۔ کویتا نے کہا کہ مسائل کی بنیاد پر ان کی پارٹی مرکزی حکومت کی تائید کر رہی ہے۔ صدر جمہوریہ اور نائب صدر کے عہدوں کیلئے این ڈی اے امیدوار کی تائید کی گئی اور انہیں امید ہے کہ مرکز تلنگانہ کے زیر التواء مسائل کی یکسوئی میں پیشرفت کرے گا۔ کویتا نے قائد اپوزیشن جانا ریڈی کے تلنگانہ جاگرتی پر عائد کردہ الزامات پر مذمت کی اور کہا کہ جرائم میں ملوث شخص ستیش کا جاگرتی سے کوئی تعلق نہیں رہا ہے بلکہ وہ کانگریس کے شنکر مدیراج کا قریبی دوست ہے۔ انہوں نے کہا کہ ٹی آر ایس ہمیشہ ورکرز کے موافق رہی ہے اور کانگریس پارٹی نے سنگارینی ورکرز کے مسئلہ پر حکومت کے اقدامات میں رکاوٹ پیدا کرنے کی کوشش کی ہے۔ کویتا نے کہا کہ تلنگانہ ریاست کی تشکیل کے بعد سنگارینی کالریز کی کارکردگی بہتر ہوئی ہے اور ورکرز بھی حکومت کے اقدامات سے مطمئن ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سنگارینی ورکرز کے تقررات کی راہ میں کانگریس رکاوٹ پیدا کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ نظام آباد حلقہ کیلئے مرکزی وزارت برقی کی جانب سے 314 کروڑ روپئے کی ادائیگی باقی ہے۔ اس سلسلہ میں وزیر برقی پیوش گوئل سے نمائندگی کی گئی۔ مرکزی وزیر شہری ترقی نریندر سنگھ تومر سے ملاقات کرتے ہوئے نظام آباد میں 100 ایکر پر تعمیر ہونے والے پارک کے سلسلہ میں تعاون کی خواہش کی گئی۔ کویتا کل 4 اگست کو خلیج کے متاثرین کے مسائل پر وزیر خارجہ سشما سوراج سے ملاقات کریں گی ۔ انہوں نے کہا کہ تقریباً 35 متاثرین کے معاملات ان کے پاس ہیں، جن پر مرکزی حکومت کو فوری توجہ دینے کی ضرورت ہے ۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ سے تعلق رکھنے والے کئی ورکرز خلیجی ممالک میں روزگار سے محرومی اور تنخواہوں کی عدم ادائیگی کے باعث پریشان حال ہیں۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT