Saturday , August 19 2017
Home / شہر کی خبریں / وزیر اعظم نریندر مودی سے چیف منسٹر چندرا شیکھر راؤ کی ملاقات

وزیر اعظم نریندر مودی سے چیف منسٹر چندرا شیکھر راؤ کی ملاقات

تلنگانہ کیلئے 30,571 کروڑ کا خصوصی پیاکیج دینے کا مطالبہ، مرکز اپنے وعدوں کو پورا کرے
حیدرآباد /12 فروری ( سیاست نیوز ) چیف منسٹر چندرا شیکھر راؤ نے آج نئی دہلی میں وزیر اعظم نریندر مودی سے ملاقات کی اور آنے والے مرکزی بجٹ برائے 2016-17 میں ریاست تلنگانہ کیلئے خصوصی فنڈس منظور کرنے کا مطالبہ کیا ۔ چیف منسٹر چندرا شیکھر راؤ نے دن کے ایک بجے وزیر اعظم سے ملاقات کی ۔ انہوں نے نئے ریاست تلنگانہ میں زیر التواء پراجکٹس کی تکمیل کیلئے 30,571 کروڑ روپئے کا خصوصی گرانڈ منظور کرنے پر زور دیا ۔ 40 منٹ کی ملاقات کے دوران چیف منسٹر کے سی آر اور وزیر اعظم مودی نے مختلف موضوعات اور مسائل پر تبادلہ خیال کیا ۔ چیف منسٹر کے سی آر نے وزیر اعظم سے درخواست کی کہ وہ آندھراپردیش ری آرگنائزیشن قانون میں کئے گئے تمام وعدوں کی تکمیل کریں ۔ انہوں نے 12 عنوانات پر مشتمل ایک یادداشت بھی پیش کی اور مودی سے خواہش کی کہ وہ مرکز سے مالی امداد کے حصول میں ان کی مدد کریں ۔ چیف منسٹر نے پراہنیت چیوڑلہ اور کالیشورم پراجکٹ کیلئے قومی پراجکٹ کا موقف عطا کرنے کی خواہش کی ۔ حیدرآباد میں انفارمیشن ٹیکنالوجی انوسٹمنٹ ریجن کے تعلق سے کام رکے ہوئے ہیں ۔ اس کیلئے مزید فنڈس کی ضرورت ہے ۔ ہائی کورٹ کی تقسیم کا عمل بھی عاجلانہ طور پرپورا کرنے کیلئے زور دیا ۔ انہوں نے وزیر اعظم نریندر مودی سے اپیل کی کہ وہ ریاست تلنگانہ کیلئے آئی پی ایس  عہدیداروں کی 30 زائد جائیدادوں کو منظور کریں ۔ کے سی آر نے کہا کہ مرکز کو چاہئے کہ وہ ایف آر ایم بی کے تحت قرض کی حد کو 0.5 تک بڑھانا چاہئے ۔ انہوں نے ٹرائبل یونیورسٹی کو مرکزی یونیورسٹی کا موقف دینے کا مطالبہ کیا ۔ ریاست تلنگانہ میں پینے کے پانی کے پراجکٹ مشن بھاگیرتا سے متعلق وزیر اعظم کو واقف کروایا اور اس کیلئے 10 ہزار کروڑ کی مالی امداد کی خواہش کی ۔ چیف منسٹر نے ورنگل میں کالوجی ہیلت یونیورسٹی کی سنگ بنیاد تقریب میں شرکت کیلئے وزیر اعظم مودی کو مدعو کیا ۔ بعد ازاں چیف منسٹر نے مرکزی وزیر برقی پی گوئیل سے ملاقات کی اور تلنگانہ ریاست میں برقی پراجکٹ کی عاجلانہ تکمیل کیلئے ان سے تعاون کی خواہش کی ۔

TOPPOPULARRECENT