Monday , September 25 2017
Home / شہر کی خبریں / نامزد عہدوں کے لیے ٹی آر ایس میں سرگرمیوں کا آغاز

نامزد عہدوں کے لیے ٹی آر ایس میں سرگرمیوں کا آغاز

شہر و اضلاع کے قائدین کی سفارشات ، دیگر جماعتوں کے قائدین بھی حصول عہدوں کے لیے کوشاں
حیدرآباد ۔ 15۔  فروری  (سیاست نیوز) گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کے انتخابات کے فوری بعد نامزد عہدوں کیلئے ٹی آر ایس میں سرگرمیوں کا آغاز ہوچکا ہے ۔ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے بلدی انتخابات سے قبل پارٹی قائدین کو تیقن دیا تھا کہ جی ایچ ایم سی انتخابات کے بعد نامزد عہدوں پر تقررات کئے جائیں گے۔ یہ مسئلہ گزشتہ 18 ماہ سے زیر التواء ہے اور پارٹی کے قائدین اور کارکنوں کو سرکاری اداروں میں عہدوں کا انتظار ہے۔ بتایا جاتاہے کہ شہر اور اضلاع سے تعلق رکھنے والے کئی قائدین نے نامزد عہدوں پر تقررات کے آغاز کیلئے سفارشات کا آغاز کردیا ہے۔ چیف منسٹر کے فرزند کے ٹی راما راؤ اور دختر کویتا سے قائدین کی ملاقاتوں کا سلسلہ جاری ہے جو چاہتے ہیں کہ جلد سے جلد نامزد عہدوں پر تقررات مکمل کئے جائیں۔ ایسے قائدین جو پارٹی کے قیام سے وابستہ ہیں، انہیں نئے قائدین کی شمولیت سے خطرہ محسوس ہورہا ہے ۔ حالیہ عرصہ میں تلگو دیشم اور کانگریس سے کئی قائدین نے ٹی آر ایس میں شمولیت اختیار کرلی ۔ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ کا ماننا ہے کہ اضلاع میں مجالس مقامی کے انتخابات اور پھر قانون ساز کونسل کے انتخابات سے نامزد عہدوں کے خواہشمندوں کی تعداد میں کمی واقع ہوئی ہے۔ اسی طرح گریٹر حیدرآباد کے انتخابات سے شہر میں دعویداروں کی کمی ہوئی ہے۔ پارٹی ذرائع کا کہنا ہے کہ شہر سے تعلق رکھنے والے دیگر جماعتوں کے قائدین بالخصوص کارپوریٹرس کو تیقن دیا گیا کہ انہیں نامزد عہدوں پر فائز کیا جائے گا ۔ باوثوق ذرائع نے بتایا کہ چیف منسٹر ورنگل اور کھمم میونسپل کارپوریشن کے انتخابات تک نامزد عہدوں پر تقررات کا آغاز نہیں کریں گے۔ حکومت آئندہ ماہ دونوں کارپوریشنوں کے انتخابات منعقد کرنا چاہتی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ چیف منسٹر کھمم کے دو روزہ دورہ پر ہیں۔ پارٹی کے اقلیتی قائدین نے اقلیتی اداروں کے نامزد عہدوں کیلئے اپنی پیروی میں شدت پیدا کردی ہے۔ کئی خواہشمند امیدواروں نے اپنے حامیوں کے ساتھ پہنچ کر کے ٹی آر اور دیگر وزراء سے سفارش کی خواہش کی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ چیف منسٹر کی موجودگی میں منگل کو کھمم میں تلگو دیشم کے کئی ایم قائدین ٹی آر ایس میں شمولیت اختیار کر لیں گے۔ جن میں پارٹی کے ضلع صدر کے علاوہ مختلف اسمبلی حلقوں کے انچارجس ، ایم پی ٹی سی ، زیڈ پی ٹی سی ، میونسپل کونسلرس اور دوسرے شامل ہیں۔

TOPPOPULARRECENT