Sunday , September 24 2017
Home / پاکستان / ناموس کیلئے بیٹی کو قتل کرنے والے باپ کو سزائے موت

ناموس کیلئے بیٹی کو قتل کرنے والے باپ کو سزائے موت

اسلام آباد 14 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان کے صوبہ سندھ میں ایک شخص کو اپنی ہی بیٹی کو ناموس کی خاطر قتل کردینے کا قصوروار ٹھہراتے ہوئے سزائے موت سنائی گئی ہے۔ گزشتہ سال 30 مارچ کو نواب شاہ ڈسٹرکٹ میں اللہ دنیولوند کو اپنی بیٹی شہزادی کو قتل کرنے کے جرم میں گرفتار کیا گیا تھا۔ ڈسٹرکٹ کے سیکنڈ ایڈیشنل سیشنس جج جلال الدین سومرو نے مقدمہ کی دیڑھ سال تک سماعت کے بعد کل سزائے موت سنائی۔ اخبار ڈان نے بھی اس سلسلہ میں جج کا حوالہ دیتے ہوئے کہاکہ جج صاحب نے فیصلہ سناتے وقت کہاکہ اللہ دینو کے معاملہ میں شک کی کوئی گنجائش نہیں ہے اور وہ پوری طرح اپنی بیٹی کے قتل کا ذمہ دار ہے۔ حالانکہ اب تک یہ معلوم نہیں ہوا کہ ناموس کے لئے قتل کی وجہ کیا تھی۔ عام طور پر ناموس کے لئے جو قتل کئے جاتے ہیں اُن میں شادی سے قبل یا شادی کے بعد کسی غیر مرد سے ناجائز تعلقات، اپنی پسند کے مرد سے شادی کرنے یا والدین کی پسند کے مرد کو مسترد کردینا شامل ہے۔ پاکستان میں ناموس کے لئے قتل کے واقعات عام ہیں۔ لیکن مقدمات صرف اُن معاملات پر چلائے جاتے ہیں جو منظر عام پر آتے ہیں ورنہ مقامی سطح پر کئی معاملات کو انتہائی رازداری کے ساتھ سرے سے منظر عام پر ہی نہیں آتے۔

TOPPOPULARRECENT