Sunday , August 20 2017
Home / شہر کی خبریں / ناکافی بارش سے تلنگانہ پرمعاشی بدحالی کے بادل، خشک سالی کے طوفان کا اندیشہ

ناکافی بارش سے تلنگانہ پرمعاشی بدحالی کے بادل، خشک سالی کے طوفان کا اندیشہ

آٹھ اضلاع میں معمول سے کم بارش، کئی اہم فصلیں متاثر، قیمتوں میں اضافہ ،عوام اور کسان پریشان

رتنا چوٹرانی
حیدرآباد۔/12اگسٹ۔تلنگانہ میں گذشتہ دو دن سے گھنے بادل اور کہیں کہیں ہلکی بارش سے اگرچہ رواں مانسون کے آخری مرحلہ میں بارش کی چند امیدیں پیدا ہوگئی ہیں جس کے باوجود اس ریاست پر معاشی اعتبار سے کچھ مختلف قسم کے بادل منڈلا رہے ہیں جس سے خشک سالی کے طوفان کا اندیشہ ہے کیونکہ کھمم اور ورنگل کے سواء دیگر تمام آٹھ اضلاع میں معمول سے بہت کم بارش ہوئی ہے ۔ نتیجتاً قحط سالی کے اندیشوں میں اضافہ ہوگیا ہے۔ رواں سال یکم جون تا 12اگسٹ تلنگانہ کے آٹھ اضلاع میں معمول سے بہت کم بارش ہوئی ہے تاہم صرف دو اضلاع کھمم اور ورنگل میں اچھی بارش ریکارڈ کی گئی۔ مانسون کے دوران اس مدت میں اوسط 461.3 ملی میٹر بارش ہوا کرتی ہے لیکن تاحال 358.4 بارش ہوئی ہے۔ اس طرح 22فیصد کم بارش ریکارڈ کی گئی ہے۔ ان اعداد کے باوجود ہنوز یہ کہنا قبل از وقت ہوگا کہ مانسون 2015مکمل طور پر ناکام ہوگیا ہے۔ ماہرین معاشیات نے کہا ہے کہ ناکافی بارش پریشان کن ہے اور صورتحال تشویشناک ہے جس سے غذائی اشیاء کی قیمتوں میں اضافہ بھی ہوسکتا ہے۔ لیکن اواخر مانسون میں اچھی بارش قیمتوں پر کنٹرول میں معاون ثابت ہوسکتی ہے۔ بارش کی صورتحال غیر یقینی ہے جس سے غذائی اِفراطِ زر میں اضافہ کے اندیشے ہیں۔اگر ناکافی بارش برقرار رہتی ہے تو اس سے کچھ نقصان بھی پہونچ سکتا ہے جو دال، تلہن کے علاوہ جوار، راگی اور باجرا جیسے اجناس کی قیمتوں میں اضافہ کی شکل میں نظر آئے گا۔ اگر اچھی بارش ہوجاتی ہے تو اس مسئلہ سے نمٹنے میں کچھ حد تک مدد ہوسکتی ہے۔

 

جوار، دال اور پیاز کی فصلیں متاثر
موسمی تجزیہ کے مطابق مہاراشٹرا، کرناٹک اور تلنگانہ میں معمول سے کم بارش کے نتیجہ میں کئی فصلوں بالخصوص مونگ، تور دال، سویاجوار وغیرہ کی فصلیں بری طرح متاثر ہوئی ہیں ۔ پیاز کی قیمتیں آسمان چھونے لگی ہیں کیونکہ کسان طلب کے مطابق فصلیں بو نہیں سکے۔ موجودہ فصلوں کو ہونے والے نقصانات بھی ان اشیاء کی قیمتوں میں اضافہ کا سبب بن رہے ہیں۔ اچھی بارش نہ ہونے کے سبب پیاز کے کاشتکاروں کیلئے بہتر نتائج برآمد نہیں ہوسکے۔

 

ورنگل اور کھمم میں سب سے زیادہ حیدرآباد، میدک، محبوب نگر میں سب سے کم بارش
میدک، حیدرآباد، محبوب نگر ، نظام آباد اور رنگاریڈی میں بہت کم بارش ہوئی ہے جہاں محکمہ موسمیات کے اعداد کے مطابق 50فیصد سے بھی کم بارش ریکارڈ کی گئی۔ اس کے برخلاف ورنگل اور کھمم میں بہت اچھی بارش ہوئی جو معمول سے بالترتیب6اور 7فیصد زیادہ ہے۔ اس موسم میں سب ڈیویژن بارش میں مجموعی طور پر 22فیصد کا خسارہ دیکھا گیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT