Monday , October 23 2017
Home / ہندوستان / ناگالینڈ چیف منسٹر اعتماد کا ووٹ لینے حاضر نہ ہوئے

ناگالینڈ چیف منسٹر اعتماد کا ووٹ لینے حاضر نہ ہوئے

اسمبلی میں باغی لیجسلیٹرز کی حاضری ۔ اسپیکر نے خصوصی سیشن غیرمعینہ ملتوی کردیا
کوہیما ، 19 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) پریشانی میں گھرے چیف منسٹر ناگالینڈ شورہوزیلی لیزیتسو اور اُن کے حامی آج اسمبلی میں حاضر ہونے میں ناکام ہوئے جہاں انھیں ایوان میں عددی طاقت کی آزمائش کا سامنا کرنا تھا، جس کے پیش نظر ایوان کو غیرمعینہ مدت کیلئے ملتوی کردیا گیا۔ گورنر پی بی اچاریہ نے گزشتہ روز اسپیکر اِمتیواپانگ کو ہدایت دی تھی کہ اسمبلی کا فوری خصوصی سیشن صبح 9.30 بجے چیف منسٹر کیلئے طلب کریں ، جنھیں اپنی پارٹی ناگالینڈ پیپلز فرنٹ (این پی ایف) کے ایم ایل ایز کی طرف سے بغاوت کا سامنا ہے اور اس لئے انھیں اعتماد کا ووٹ حاصل کرنا ہوگا۔ سابق چیف منسٹر ٹی آر زیلیانگ جو باغی این پی ایف ارکان اسمبلی کے لیڈر ہیں، وہ اپنے حامیوں کے ساتھ ایوان میں موجود تھے۔ اسپیکر نے بتایا کہ چیف منسٹر کی اکثریت ثابت کرنے کیلئے تحریک پیش نہ کی جاسکی کیونکہ وہ خود موجود نہ تھے اور ایوان کو غیرمعینہ مدت کیلئے ملتوی کردیا گیا۔ اسپیکر نے کہا کہ وہ ایوان کی کارروائی سے گورنر کو واقف کرائیں گے۔ لیزیتسو کیمپ کے لیجسلیٹرز سے رابطے کی کوششیں بیکار ہوئیں کیونکہ انھوں نے فون کالس پر جواب نہیں دیا۔ قبل ازیں چیف منسٹر کو گورنر کی ہدایت تھی کہ 15 جولائی تک اعتماد کا ووٹ حاصل کرلیں، جس پر وہ گوہاٹی ہائیکورٹ کی کوہیما بنچ سے رجوع ہوئے، جس نے ان کی عرضی خارج کردی۔ چنانچہ گورنر اچاریہ نے گزشتہ روز اسپیکر کو خصوصی سیشن طلب کرنے کیلئے کہا تھا۔

TOPPOPULARRECENT