Friday , August 18 2017
Home / اضلاع کی خبریں / نبی کریمؐرحمت کے مبارک طریقوں کو اپنانے کی تلقین

نبی کریمؐرحمت کے مبارک طریقوں کو اپنانے کی تلقین

مٹ پلی /12 ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) ضلعی سطح تبلیغی اجتماع 9، 10 جنوری کا مٹ پلی ( آراپیٹ علاقہ ) میں انعقاد عمل میں آیا ۔ اس اجتماع میں شہر مٹ پلی کے علاوہ اطراف کے مقامات اور کریم نگر ضلع بھر سے تقریباً 20 ہزار فرزندان توحید نے شرکت کی اجتماع کے انعقاد سے کئی دن قبل ذمہ داران تبلیغی جماعت حیدرآباد اور کریم نگر کے مقامی احباب نے دعوت دین کی محنتوں میں لگے رہے ۔ کل اجتماع کا آخری دن تھا ۔ مٹ پلی شہر کا نوجوان طبقہ ( مسلم پورہ بوتھ سلطان پورہ بوتھ ، عیدگاہ محلہ یوتھ ، برکت پورہ یوتھ ، گاجل پیٹ یوتھ ، بیِی کالونی یوتھ ، بلال پورہ یوتھ ، ربانی پورہ یوتھ ، مومن پورہ یوتھ ، ایس آر ایس پی کیمپ یوتھ ) کے علاقہ مقامی ذمہ داران علماء ائمہ حفاظ اور مدرسہ تجوید القرآن کے طلباء نے اپنے متعلقہ ذمہ داریوں میں حصہ لیا ۔ اجتماع کے انعقاد کیلئے جناب محمد یوسف معہ برادران کے اپنی اراضی پیش کریت ہوئے تعاون کیا جبکہ اجتماع میں مقامی ڈاکٹر رگھو نے طبی خدمات پیش کیں ۔ اجتماع کی آخری نشست سے مبلغ مفتی عبدالوہاب ( نیلور ) نے مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ اللہ نے بے شمار چیزوں کو دنیا میں پیدا فرمایا ۔ اللہ نے انسان کی کامیابی انسان کے اندر پوشیدہ رکھی ہے ۔ انسان جن چیزوں کو دیکھھنتا ہے اس میں سکون و راحت کو تلاش کرتا ہے ۔ انسان کے اندر بھی دفینہ ہے جیسے زمین کے اندر چھپے ہوئے خزانے سونا ، چاندی کو اللہ نے نبیوں کو دنیا میں بھیجا کہ انسان کے دل کی آنکھ کو کھولے کان پر پر پڑے پردے کو ہٹائے ۔ اس کے دل پر پڑے پردے کو ہٹائے تب پوشیدہ چیزیں نظر آئیں گی ۔ انہوں نے ایک صحافی کی مثال دے کر کہی کہ وہ ظاہری اندھے تھے لیکن ان کا باطن پاک تھا اللہ کے نزدیک ان کا ایک مقام تھا جو وحی کے ذریعہ سے نبی ﷺ کو بتلایا گیا ۔ انسانوں کو چاہئے کہ اپنے باطن کو پاک کرتے ہوئے دل کی آنکھ کو کھولے جو انسان باوجود مہلت کے نہیں سدھرتا ہے اس کے اوپر باطل کا مہر لگادیا جاتا ہے ۔ حضرات صحابہ کرام نے نبی ﷺ کے مبارک طریقوں کو اپنی زندگی میں اپنا لیا ہر محاذ پر کامیابی ان کے قدم چومتی رہی ۔ انہوں نے کہا کہ ہر چیز کو اللہ سے مانگنے کی دعاء کی طاقت دل کا یقین ہے ۔ انسانی جسم میں دل کی مثال نبی ﷺ دیتے ہوئے فرمایا کہ اگر یہ درست ہوگیا تو سارے اعمال اچھے ہوں گے اگر یہ ( دل ) بگڑ گیا تو ساری آفتیں آئیں گی ۔ اللہ کے دین کی نسبت پر نبی ﷺ بہت ستائے گئے ۔ ابتدائی مرحلہ اسلام صحابہ کو بھی تکالیف دشمنان اسلام کی طرف سے دی گئی ۔ حضرت بلال کو تبتی ہوئی گرم ریت پر لٹاکر چٹان ان کے سینہ پر رکھی جاتی تھی ۔ پھر بھی وہ ایمان پر ثابت قدم رہے ۔ انہوں نے قرآنی آیت کا حوالہ دے کر کہا کہ ایمان والوں ایمان بناؤ دنیا کی ہر چیز چھوٹے گی لیکن ایمان جنت میں لے جائے گا ۔

TOPPOPULARRECENT