Saturday , August 19 2017
Home / سیاسیات / نتیش کمار نے بی جے پی سے مل کر 12 سال حکومت کی سیکولر کردار کے بارے میں ملائم سنگھ کا استفسار، عظیم تر اتحاد میں واپسی کا امکان ختم

نتیش کمار نے بی جے پی سے مل کر 12 سال حکومت کی سیکولر کردار کے بارے میں ملائم سنگھ کا استفسار، عظیم تر اتحاد میں واپسی کا امکان ختم

نئی دہلی ۔ 8 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) بہار میں عظیم اتحاد سے علحدگی کے بعد سماج وادی پارٹی سربراہ ملائم سنگھ یادو نے چیف منسٹر بہار نتیش کمار کے سیکولر کردار کے بارے میں سوال اٹھایا۔ انہوں نے کہا کہ نتیش کمار نے بی جے پی کے ساتھ مل کر تقریباً 12 سال حکومت کی اور اقتدار کے مزے لوٹے۔ انہوں نے اب اپنا موقف تبدیل کیا ہے۔ ملائم سنگھ یادو کے اس تبصرہ کے بعد سماج وادی پارٹی کی دوبارہ جنتادل (یو) ۔ آر جے ڈی۔ کانگریس عظیم تر اتحاد میں دوبارہ شمولیت کی قیاس آرائیاں ختم ہوچکی ہیں۔ سماج وادی پارٹی نے گذشتہ ہفتہ بہار میں نشستوں کی تقسیم کے مسئلہ پر اس عظیم اتحاد سے علحدگی اختیار کرلی تھی۔ ملائم سنگھ یادو نے نتیش کمار کے سیکولر کردار کے بارے میں سوال اٹھاتے ہوئے کہا کہ جنتادل (یو) لیڈر آسانی کے ساتھ اپنے دوستوں اور حلیفوں کو بدل دیتے ہیں۔ وہ حالیہ عرصہ تک بی جے پی کی تائید کا فائدہ اٹھاتے رہے۔ دوسری طرف ملائم سنگھ یادو نے کہا کہ ان کی پارٹی نے ہمیشہ بی جے پی کی مخالفت کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ بہار میں جو کچھ ہورہا ہے اسے دیکھنے کے بعد وہ کہہ سکتے ہیں کہ سماج وادی پارٹی نے ہمیشہ بی جے پی کی مخالفت کی۔ پھر سیکولر کون ہے؟ بہار میں جنہوں نے 12 سال تک بی جے پی کی تائید سے حکومت چلائی، انہیں سیکولر کہا جائے یا سماج وادی پارٹی سیکولر ہے۔ بہار سماج وادی پارٹی صدر رام چندر سنگھ یادو نے کل کہا تھا کہ ان کی پارٹی مجوزہ انتخابات میں تمام 243 نشستوں پر مقابلہ کرے گی۔ انہوں نے ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے کہا کہ سماجوادی پارٹی سربراہ ملائم سنگھ یادو نے پارٹی کارکنوں کے احساسات کو ملحوظ رکھتے ہوئے پارٹی پارلیمانی بورڈ کا یہ فیصلہ قبول کیا ہے کہ بہار میں عظیم تر سیکولر اتحاد سے عحلدگی اختیار کرلی جائے۔ انہوں نے کہا کہ سماج وادی پارٹی کی علحدگی کے بعد بہار میں عظیم تر سیکولر اتحاد عملاً ختم ہوچکا ہے اور اب یہاں جنتادل (یو) اور آر جے ڈی کے مابین لاٹھیوں کا استعمال ہوگا۔

TOPPOPULARRECENT