Saturday , August 19 2017
Home / ہندوستان / نریندر مودی انتخابی وعدوں کی تکمیل میں ناکام : راہول گاندھی

نریندر مودی انتخابی وعدوں کی تکمیل میں ناکام : راہول گاندھی

وہ دن چلے گئے جب لوگ ’’ دال روٹی کھاؤ ۔ پربھو کے گن گاؤ ‘‘ کا گیت گاتے تھے ۔ کانگریس نائب صدر کا مرکز پر طنز

اراریہ 2 نومبر ( سیاست ڈاٹ کام ) کانگریس کے نائب صدر راہول گاندھی نے آج وزیر اعظم نریندر مودی پر لوک سبھا انتخابات کی مہم کے دوران کئے گئے انتخابی وعدوں کی تکمیل میں ناکام ہوجانے کا الزام عائد کیا اور کہا کہ مودی کے اقدامات کی وجہ سے کانگریس جلد اقتدار پر واپسی کریگی ۔ راہول گاندھی نے یہاں ایک انتخابی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مودی نے اشیائے ضروریہ کی قیتموں میں کمی کرنے کا وعدہ کیا تھا ۔ دال کی قیمت 70 روپئے فی کیلو سے بڑھ کر 200  روپئے فی کیلو ہوگئی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ایک وقت ہوا کرتا تھا جب لوگ یہ گنگناتے تھے کہ ’’ دال روٹی کھاؤ ۔ پربھو کے گن گاؤ ‘‘ ۔ اب مودی چاہتے ہیں کہ عوام اس گیت میںتبدیلی کریں اور یہ گائیں کہ ’’ دال روٹی مت کھاؤ ۔ پربھو کے گن گاؤ ‘‘ ۔ انہوں نے کہا کہ این ڈی اے کا پانچ سالہ دور اقتدار تیزی سے ختم ہوگا اور کانگریس اقتدار پر واپسی کریگی ۔ انہوں نے کہا کہ حالانکہ نریندر مودی ایک سال سے زیادہ وقت سے اقتدار پر ہیں لیکن اشیائے ضروریہ کی قیمتیں کم ہونے کی بجائے بہت زیادہ بڑھ جائیں گی ۔ راہول نے کہا کہ نریندر مودی نے وعدہ کیا تھا کہ وہ نوجوانوں کو روزگار فراہم کرینگے ۔ انہوں نے جلسہ میں شریک نوجوانوں سے سوال کیا کہ آیا آپ میں سے کسی کو بھی روزگار حاصل ہوا ہے ؟ ۔ بیرونی ممالک میں رکھے گئے ہندوستانی کالے دھن کے تعلق سے راہول نے کہا کہ وزیر اعظم کالا دھن واپس لانے اور ہر ہندوستانی کے بینک اکاؤنٹ میں 15 لاکھ روپئے منتقل کرنے کا وعدہ پورا کرنے میں بھی ناکام رہے ہیں۔ انہوں نے مرکزی وزیر وی کے سنگھ پر بھی تنقید کی جنہوں نے یہ ریمارک کیا تھا کہ اگر کسی نے کتے پر پتھر مارا تو اس کیلئے حکومت کو ذمہ دار قرار نہیں دیا جاسکتا ۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی وزیر کا یہ ریمارک احساس سے عاری ہے کیونکہ بحیثیت وزیر وہ ایک دو سالہ لڑکے اور اس کی گیارہ ماہ کی بہن کی ہلاکت پر تبصرہ کر رہے تھے ۔ ان دونوں کی موت اس وقت واقع ہوگئی تھی جب فرید آباد میں ان کے گھر کو اعلی ذات والوں نے نذر آتش کردیا تھا ۔ راہول گاندھی نے وی کے سنگھ کا نام لئے بغیر کہا کہ یہ دو بچے کتے نہیں تھے ۔ یہ ملک کے شہری تھے اور ہندوستان کا مستقبل تھے ۔ انہوں نے بی جے پی اور آر ایس ایس پر الزام عائد کیا کہ مہاراشٹرا جیسی ریاستوں میں بہار کے عوام کو نشانہ بنایا جا رہا ہے ۔ این ڈی اے حکومت کی میک ان انڈیا مہم کو نشانہ بناتے ہوئے انہوں نے کہا کہ شیر ببر کی تصویر والی یہ مہم بھی عوام کو روزگار فراہم کرنے میں ناکام ہوگئی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اس مہم کے نتیجہ میں صرف مودی کے دوستوں کو کنٹراکٹس حاصل ہوئے ہیں۔ انہوںنے مودی کے اس الزام کو مسترد کردیا کہ کانگریس دور حکومت میں کوئی ترقی نہیں ہوئی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ آج دنیا ہندوستان کو ایک ترقی یافتہ ملک کی صورت میں دیکھ رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ترقی کا یہ سفر گذشتہ 70 سال میں طئے کیا گیا ہے ۔ ترقی نہ ہونے کا دعوی کرتے ہوئے نریندر مودی صرف کانگریس پر تنقید نہیں کر رہے ہیں بلکہ ہندوستان کی طاقت اور اس کی صلاحیت پر سوال کر رہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT