Sunday , September 24 2017
Home / شہر کی خبریں / نل کنکشن کو باقاعدہ بنانے کے منصوبہ پر عمل آوری کا آغاز

نل کنکشن کو باقاعدہ بنانے کے منصوبہ پر عمل آوری کا آغاز

قدیم میٹرس کی جگہ نئے میٹرس کی تنصیب ، حصول آب کا حساب ہوگا
حیدرآباد۔23اگسٹ (سیاست نیوز) شہر حیدرآباد میں محکمہ آبرسانی کی جانب سے تمام نل کنکشن کو باقاعدہ بنانے کے منصوبہ کو عملی جامہ پہنانے کے اقدامات شروع کر دیئے گئے ہیں اور قدیم میٹروں کی جگہ نئے میٹرس کی تنصیب کو ممکن بنایا جا رہا ہے تاکہ شہر میں موجود تمام نلوں کے کنکشنس کے ذریعہ استعمال کئے جانے والے پانی کی حقیقی مقدارکا پتہ چلایا جاسکے۔ محکمہ آبرسانی کے مطابق حیدرآباد میں نوآبادیاتی علاقوں میں جہاں غیر مجاز پانی کے کنکشن لئے گئے ہیں ان علاقوں میں نئے میٹرس کی تنصیب کے ذریعہ انہیں باقاعدہ بنانے کے لئے کوششیں شروع کی جا چکی ہیں اور کہا جا رہا ہے کہ ملکا جگری کے علاقہ سے اس مہم کا آغاز کیا جا رہا ہے اور بتدریج ان تمام نو آبادیاتی علاقوں کا احاطہ کیا جائے گا جہاں نئے مکانات تعمیر کئے گئے ہیں اور نئے نل کے کنکشن حاصل کئے گئے ہیں۔ شہر کو حاصل ہو رہی وسعت کو دیکھتے ہوئے محکمہ آبرسانی نے اپنے صارفین کی تعداد میں اضافہ کا فیصلہ کیا ہے اور توقع ہے کہ آئندہ ماہ کے اوائل میں مکمل رپورٹ کی تیاری کے فوری بعد اس پر عمل آوری کو ممکن بنایا جائے گا۔ حیدرآباد کے اطراف بسائی جانے والی بستیوں میں جہاں محکمہ آبرسانی کے کنکشن موجود ہیں اور عوام نے کنکشن حاصل کئے ہیں لیکن ان کے پاس اب تک میٹر کی تنصیب عمل میں نہیں لائی گئی ہے ان علاقوں میں میٹروں کی تنصیب کے علاوہ باقاعدہ بنانے کا عمل انجام دیا جائیگا۔ بتایا جاتا ہے کہ شہر حیدرآباد کے مختلف علاقو ں میں مکینوں کے غیر کارکرد میٹروں کی تبدیلی کے لئے بھی حکمت عملی تیار کی جا رہی ہے تاکہ انہیں کارکرد میٹرس نصب کرتے ہوئے آبی سربراہی کا جائزہ لیا جا سکے ۔ محکمہ آبرسانی کے اعلی عہدیداروں کے مطابق شہر حیدرآباد میں جملہ 8لاکھ 70ہزار گھریلو صارفین ہیں جو محکمہ ٓابرسانی کا پانی استعمال کر رہے ہیں اور ان میں صرف 1لاکھ 67ہزار صارفین کے پاس کارکرد آبی سربراہی کے میٹر موجود ہیں مابقی میٹرس کی عدم کارکردگی کے سبب ان سے اقل ترین بل وصول کیا جا رہا ہے اسی لئے محکمہ آبرسانی نے فیصلہ کیا ہے کہ جلد از جلد میٹر س کی تبدیلی کے ذریعہ صورتحال کو معمول پر لانے کے علاوہ محکمہ آبرسانی کی آمدنی میں اضافہ کے اقدامات کئے جائیں ۔بتایا جاتا ہے کہ محکمہ آبرسانی نے تمام میٹرس کونکالتے ہوئے ان کی جگہ نئے میٹرس کی تنصیب کے لئے 85کروڑ کا تخمینہ لگایا ہے اوراس کام کو آئندہ ماہ کے اواخرتک مکمل کرنے کا منصوبہ بنایا ہے لیکن کہا جا رہاہے کہ محکمہ آبرسانی کے پاس موجود رپورٹ کے مطابق اس کام کی تکمیل کیلئے کم از کم 4ماہ درکار ہوں گے اور آئندہ ماہ کے اوائل میں رپورٹ موصول ہوتے ہی میٹرس کی تبدیلی کا کام شروع کردیا جائے گا جو تکمیل تک جاری رہے گا۔مرحلہ وار انداز میں تکمیل کئے جانے والے اس پراجکٹ کے دوران شہر کے گنجان آبادی والے سلم علاقوں میں بھی میٹرس کی تبدیلی انجام دیئے جانے کا منصوبہ ہے۔

TOPPOPULARRECENT