Monday , September 25 2017
Home / اضلاع کی خبریں / نندیال میں قتل کی وارداتوں سے عوام میں خوف کی لہر

نندیال میں قتل کی وارداتوں سے عوام میں خوف کی لہر

شہر میں بڑھتی غنڈہ گردی کی اہم وجہ پولیس کی ناکامی

نندیال ۔ 14 ۔ جنوری : ( سیاست نیوز ) : نندیال میں پولیس کی ناکامی سے غنڈہ گردی بڑھتی جارہی ہے ۔ اس کے کئی مثالیں موجود ہیں ۔ دسمبر 31 کو نندیال کے سی پی کامپلکس کے پیچھے دن دھاڑے روڈی شیٹر مدھو کا قتل کردیا گیا ۔ کل ان قاتلوں کو نندیال کی پولیس حراست میں لے کر کرنول کے ایس پی روی کرشنا کے سامنے پیش کی ۔ مدھو ایک روڈی شیٹر تھا وہ کچھ مہینوں پہلے روڈی شیٹر بالا نجنیولو اور شوا کمار کو نندیال کے سنچر نگر کے ایک روڈ پر قتل کروا کر نعشوں کو ڈرین میں پھینک دیا تھا ۔ اس کی وجہ سے شوا کمار کا بھائی وہ بھی روڈی شیٹر تھا جس کا نام بدری ناتھ تھا اس لیے بی مدھو کو قتل کیا ۔ لوگوں کا ماننا ہے کہ آج کل نندیال میں غنڈہ گردی زیادہ ہوتی جارہی ہے ۔ جس سے نندیال کے لوگ خوف میں مبتلا ہیں ۔ کیوں کہ کچھ مہینوں سے نندیال میں قتل کی وارداتیں زیادہ ہورہی ہیں ۔ ڈاکٹر شیلندر ناتھ کا قتل ایک اپارٹمنٹ میں ایک لاکھ روپیوں کے لیے ایک خاندان کے بزرگ لوگوں کا قتل ، ایک مندر کے پجاری کا قتل ، راج تھیٹر کے پاس دن دھاڑے کچھ لوگوں سے ایک سیکل موٹر پر سوار نوجوان کو راڈوں سے حملہ کیا ۔ نندیال تھری ٹاون پولیس اسٹیشن کے قریب ایک طالبہ کو گھر جاکر ایک نوجوان نے شادی کا مطالبہ کیا اور نہ ماننے پر اس کے والدین پر حملہ کیا گیا جس کی وجہ سے طالبہ نے خود کشی کرلی ۔ ایک ڈاکٹر کے گھر گھس کر کچھ غنڈے ان کی سیکل موٹر کو آگ کے حوالے کیا ۔ اس طرح کی غنڈہ گردی آئے دن ہوتی رہتی ہے ۔ اس کی وجہ پولیس کی ناکامی بتائی جارہی ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT