Monday , August 21 2017
Home / پاکستان / نواز شریف کے خلاف نااہلی کی درخواست داخل

نواز شریف کے خلاف نااہلی کی درخواست داخل

اسلام آباد۔ 16 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان کے سابق جسٹس افتخار محمد چودھری کی سیاسی جماعت پاکستان جسٹس اینڈ ڈیموکریٹک پارٹی نے لاہور ہائی کورٹ میں وزیراعظم نواز شریف کے نااہلی کے درخواست داخل  کرادی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ لندن میں موجود اثاثے ظاہر نہ کرنے پر وزیراعظم ’صادق اور امین‘ نہیں رہے۔ وزیراعظم نوازشریف کی اہلیت کیخلاف درخواست جسٹس اینڈ ڈیموکریٹک پارٹی کے مدثر چودھری ایڈوکیٹ کے توسط سے جمعہ کے روز جمع کرائی گئی ہے۔ مدثر چودھری کے مطابق رٹ پٹیشن سابق چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کی مشاورت سے جمع کرائی گئی ہے جس میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ وزیراعظم نواز شریف آئین کے آرٹیکل 63 کی دفعہ 2 پر پورا نہیں اترتے کیونکہ انھوں نے اپنی لندن کی جائیداد اپنے گوشواروں میں ظاہر نہیں کی۔ درخواست میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ جسٹس اینڈ ڈیموکریٹک پارٹی نے وزیراعظم نوازشریف کی نااہلی کے لیے اسپیکر قومی اسمبلی کے پاس ریفرنس دائر کیا مگر اسپیکر نے ان کی کوئی پذیرائی نہیں کی اور ریفرنس پر اعتراض لگا کر واپس کردیا۔
پاکستان امریکہ کا ساتھی: اولسن
واشنگٹن، 16 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) امریکی ایلچی برائے افغانستان و پاکستان نے رچرڈ اولسن نے کہا ہے کہ جنگجو تنظیم القاعدہ کے صفائے کے لئے پاکستان نے امریکہ کے ساتھ مل کر کام کیا ہے ۔ امریکی سینٹ کی خارجہ امور کی کمیٹی کے سامنے مسٹر اولسن نے کہا کہ دہشت گردی کے خاتمہ کے لئے پاکستان کے ضرب عضب مہم سے دہشت گردوں کے محفوظ ٹھکانوں کو تباہ کرنے کی سمت میں اہم پیشرفت ہوئی ہے ۔ مسٹر اولسن کے مطابق پاکستانی قیادت نے جنگجوؤں کے ٹھکانوں کو ختم کرنے کا عزم کررکھا ہے۔
اور امریکہ اس حوالے سے پاکستان کے فوجی سربراہ راحیل شریف کے 6 جولائی کو دیئے گئے بیان کا احترام کرتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ افغانستان اور پاکستان کے درمیان تعمیری تعلقات خظہ میں امن و استحکام لانے لئے ضروری ہیں ۔ مسٹر اولسن کے مطابق افغان صدر اشرف غنی کے الیکشن کے بعد افغانستان اور پاکستان کے درمیان تعلقات میں بہتری آئی تھی لیکن پچھلے چند سالوں میں پناہ گزیں سرحدی بندوبست اور دہشت گردی سمیت کئی سنجیدہ امور پر دونوں ملکوں کے درمیان کچھ تلخی آئی تھی۔ انہوں نے کہا گو حالیہ مہینوں میں دونوں ملکوں کے تعلقات میں سدھار کے حوصلہ افزا آثار نظر آئے ہیں۔ افغان وزیر خارجہ ربانی اور پاکستان کے خارجہ امور کے مشیر سرتاج عزیز کی جون میں ملاقات کے بعد دونوں فریقوں نے سرحدی بندوبست اور دہشت گردی کے خلاف تال میل قائم کرنے سے اتفاق کیا تھا۔دونوں ملکوں کے درمیان پہلی مرتبہ فوجی سطح کی میٹنگ جولائی میں ہوئی تھی اور دوبارہ ملنے سے اتفاق کیا گیا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT