Friday , September 22 2017
Home / شہر کی خبریں / نوجوانوں کو روزگار فراہمی کیلئے حکومت کی مساعی

نوجوانوں کو روزگار فراہمی کیلئے حکومت کی مساعی

کودنڈا رام کو احتجاجی ریالی منسوخ کرنے کا مشورہ، ٹی آر ایس ایم پی ونود کا بیان
حیدرآباد 12 فروری (سیاست نیوز) سینئر قائد تلنگانہ راشٹرا سمیتی و رکن پارلیمان مسٹر ونود نے صدرنشین تلنگانہ پولٹیکل جوائنٹ ایکشن کمیٹی پروفیسر ایم کودنڈا رام سے 22 فروری کو منظم کی جانے والی ریالی سے دستبرداری اختیار کرنے کی اپیل کی اور کہاکہ حکومت مرحلہ وار اساس پر تعلیم  یافتہ بے روزگار نوجوانوں کو ملازمتیں فراہم کرنے کے اقدامات کررہی ہے اور اب تک کئی بے روزگار تعلیم یافتہ نوجوانوں کو ملازمتیں فراہم کی جاچکی ہیں۔ علاوہ ازیں تلنگانہ پبلک سرویس کمیشن کے ذریعہ ہزاروں مخلوعہ جائیدادوں پر تقررات عمل میں لائے جاچکے ہیں اور آئندہ چند ماہ کے دوران بھی تلنگانہ پبلک سرویس کمیشن کے ذریعہ ہزاروں جائیدادوں پر تقررات عمل میں لانے کے لئے اعلامیے جاری کئے جاچکے ہیں۔ مسٹر ونود نے اخباری نمائندوں سے غیر رسمی بات چیت کرتے ہوئے کہاکہ چیف منسٹر کے چندرشیکھر راؤ نے عوام بالخصوص طلباء سے انتخابات کے موقع پر تلنگانہ جدوجہد میں حصہ لینے والے نوجوانوں سے وعدہ کیا تھا کہ وہ برسر اقتدار آنے کے ساتھ ہی مرحلہ وار اساس پر ملازمتیں فراہم کریں گے اور اپنے اس وعدے کے مطابق چیف منسٹر اقدامات کررہے ہیں۔ انھوں نے پروفیسر کودنڈا رام پر سخت تنقید کرتے ہوئے کہاکہ جہاں چیف منسٹر بے روزگار نوجوانوں کو ملازمتیں فراہم کروانے کے لئے اقدامات کررہے ہیں وہیں کودنڈا رام طلباء اور بالخصوص بے روزگار افراد کو حکومت کے خلاف اُکساتے ہوئے بے روزگار افراد کو سڑکوں پر لاکھڑا کرنے کے لئے کوشاں ہیں جوکہ کوئی مناسب بات نہیں ہے۔ مسٹر ونود رکن پارلیمان نے کہاکہ سیاسی مفادات کے حصول کے لئے طلباء و بے روزگار نوجوانوں کو سڑکوں پر لانے سے گریز کرنے کا کودنڈا رام کو مشورہ دیا۔

TOPPOPULARRECENT