Monday , September 25 2017
Home / کھیل کی خبریں / نوعمر فٹبال کھلاڑی ڈنمارک میں صلاحیتوں کا مظاہرہ کریں گے

نوعمر فٹبال کھلاڑی ڈنمارک میں صلاحیتوں کا مظاہرہ کریں گے

کولکتہ 16 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) دربار اسپورٹس اکیڈیمی کے نوعمر فٹبال کھلاڑی ڈنمارک میں منعقد شدنی ٹورنمنٹ میں حصہ لینے کے لئے تیار ہوچکے ہیں اور اب اپنی پرواز کے منتظر ہیں۔ دربار اکیڈیمی کے یہ تمام نوعمر فٹبالرس دراصل جسم فروش عورتوں کے بچے ہیں جنھیں 16 جولائی کا انتظار تھا۔ اس دن یہ تمام 16 فٹبالرس اپنے خواب کو حقیقت میں بدلتا دیکھیں گے اور طیارہ میں سوار ہوکر ڈنمارک روانہ ہوگئے جہاں ڈانا کپ میں مختلف ٹیموں سے ان کا مقابلہ ہوگا۔ یہ تمام اُبھرتا فٹبالرس مغربی بنگال میں فحاشی کے لئے بدنام زمانہ علاقہ سونا گاچی میں رہنے والی جسم فروش عورتوں کے بچے ہیں جنھیں 25 جولائی سے شروع ہونے والے ڈانا کپ ٹورنمنٹ میں حصہ لینے کے لئے مدعو کیا گیا ہے۔ یہ پہلا موقع ہوگا کہ سیکس ورکرس کے بچوں پر مشتمل ٹیم دنیا بھر کی مختلف ٹیموں سے مسابقت کیلئے ایکشن میں دیکھی جائے گی۔ ایک مرحلہ پر اسپانسرس نہ ملنے کے سبب ایسا معلوم ہورہا تھا کہ ان بچوں کے خواب بکھر جائیں گے لیکن ایک اسپورٹس ویب سائٹ ایکسٹرا ٹائم نے سرکردہ کیبل نیٹ ورکس ایس آئی ٹی آئی براڈ بینڈ کے تعاون و اشتراک سے فنڈس جمع کرنے کے لئے 16 جولائی کو کولکتہ کے نذر اسلام منچ پر موسیقی کے ایک پروگرام کا اہتمام کیا جس سے  حاصل ہونے والی رقم ان بچوں کے ڈنمارک سفر کے لئے استعمال کی جارہی ہے۔ موسیقی کے اس خصوصی پروگرام کا نام ’’اُڑان ۔ اُمید کی پرواز‘‘ رکھا گیا ہے جس میں قومی ایوارڈ یافتہ روپن کمار، اوشا اتھپ، ایشس کنگ اور دوسرے حصہ لے رہے ہیں۔ ایکسٹرا ٹائم کے ڈائرکٹر انیلوا چٹرجی نے کہاکہ ’’اس ملک کے شہری کی حیثیت سے ہم یہ اپنی ذمہ داری محسوس کرتے ہیں کہ مراعات سے محروم ان بچوں کا ساتھ دینا ہماری ذمہ داری ہے۔ یہ بچے محض مالی مشکلات کے سبب ٹورنمنٹ میں حصہ لینے کے لئے ڈنمارک کا سفر نہیں کرسکتے تھے۔

TOPPOPULARRECENT