Friday , August 18 2017
Home / ہندوستان / نوٹوں کی منسوخی سے نکسلائٹس بھی پریشان

نوٹوں کی منسوخی سے نکسلائٹس بھی پریشان

جھارکھنڈ میں رقومات کے تبادلے کے لیے معمر افراد کا استعمال
لتیہار ( جھارکھنڈ ) ۔ 16 ۔ نومبر : (سیاست ڈاٹ کام ) : سرکاری حکام کی جانچ کا سامنا کرنے سے بچنے کے لیے جھارکھنڈ میں نکسلائٹس نے غیر محسوب رقومات کے تبادلے کے لیے معمر افراد کو مجبور کررہے ہیں ۔ جھارکھنڈ میں نکسلائٹس سرگرمیوں سے متاثرہ ضلع لتیہار میں ماویسٹوں نے پارٹی لیوی ، جزیہ اور تاون کی شکل میں کروڑہا روپئے وصول کیے ہیں لیکن حکومت کی جانب سے 500 اور 1000 روپئے کے نوٹوں کی منسوخی کے بعد یہ رقومات ناقابل استعمال ہوگئی ہیں ۔ چونکہ حکومت نے ہر ایک اکاونٹ میں 2.5 لاکھ روپئے ڈپازٹ کروانے کی سہولت فراہم کی ہے جس کا فائدہ اٹھانے والے نکسلائٹس نے معمر افراد کو ان کی غیر محسوب رقومات کا تبادلہ کروانے کے لیے مجبور کیا جارہا ہے ۔ ضلع پولیس سپرنٹنڈنٹ انوپ برتھارے نے ان اطلاعات کی تصدیق کی ہے کہ نکسلائٹس اپنی ناجائز دولت کے تبادلہ کے لیے معصوم دیہاتیوں کا استعمال کررہے ہیں تاکہ ان کے اکاونٹس میں یہ رقومات ڈپازٹ کرواتے ہوئے قانونی شکل دی جائے ۔ انہوں نے بتایا کہ گذشتہ دو یوم سے مختلف مقامات پر تلاشی مہم جاری ہے تاکہ غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث افراد کو پکڑا جاسکے ۔ ہمیں یہ شبہ ہے کہ دیہاتوں میں نکسلائٹس کے ہمدرد نوٹوں کے تبادلے کے لیے اعانت کررہے ہیں ۔

چند روز قبل ایک معمر خاتون جو کہ کرنسی نوٹ کی شناختی سے بھی قاصر تھی اپنے جن دھن اکاونٹ میں 4.5 لاکھ روپئے ڈپازٹ کروانے پہنچی تھی لیکن بینک عہدیداروں کی جانب سے پیان کارڈ کی طلبی پر واپس چلے گئی ۔ بعض دیہاتیوں نے انکشاف کیا کہ نوٹوں کے تبادلے پر انہیں 30 فیصد تک کمیشن ( حصہ داری ) دیا جارہا ہے اور یہ کام معمر افراد بہ آسانی انجام دے رہے ہیں ۔ دریں اثناء انسپکٹر جنرل سی آر پی ایف ( جھارکھنڈ ) سنجے اے لٹکرنے بتایا بینکوں کے قریب سخت نگرانی رکھی جارہی ہے اور مشتبہ افراد کو بھاری رقومات کے ساتھ حراست میں لے کر پوچھ تاچھ کی جارہی ہے ۔ حال ہی میں CRPF نے سی پی آئی ( ماویسٹ ) سے منقسم گروپ پیپلز لبریشن فرنٹ آف انڈیا کے 2 مشتبہ کارکنوں کی تحویل سے 25 لاکھ روپئے ضبط کیے تھے ۔ پولیس اور سنٹرل سیکوریٹی عہدیداروں نے بتایا کہ نکسلائٹس نے لیوی اور تاوان کے نام پر 1,500 کروڑ روپئے جمع کرلیے ہیں اور لوٹ مار کی دولت کی تقسیم کے لیے نکسلائٹس کے متعدد گروپ وجود میں آئے ہیں اور یہ دولت اغواء ، لوٹ ، منشیات کی تجارت کے ذریعہ حاصل کی جاتی ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT