Sunday , August 20 2017
Home / Top Stories / نوٹ بندی : صدر جمہوریہ عوام کو مشکلات سے بچائیں

نوٹ بندی : صدر جمہوریہ عوام کو مشکلات سے بچائیں

مودی کا شرمناک فلاپ شو، ملک تباہی کے دہانے پر : ممتا بنرجی
نئی دہلی/کولکتہ۔9جنوری (سیاست ڈاٹ کام) چیف منسٹر مغربی بنگال ممتا بنرجی نے صدر جمہوریہ پرنب مکرجی پر زور دیا ہے کہ وہ نوٹ بندی اور اس کے نتیجہ میں نقد رقم کے بحران کی وجہ سے عوام کو درپیش مشکلات انہیں بچائیں۔ انہوں نے دعوی کیا کہ سی بی آئی کو ان کی پارٹی کے خلاف نشانہ بنانے کے لئے استعمال کیا جارہا ہے۔ ترنمول کانگریس صدر نے صدر جمہوریہ سے خواہش کی جو ملک کے دستوری سربرا ہ ہیں، حکومت کے غلط فیصلوں کی وجہ سے ملک تباہی کے دہانے پر پہنچ گیا ہے لہٰذا انہیں چاہئے کہ عوام کا تحفظ یقینی بنائیں۔ انہوں نے کہا کہ قحط شروع ہوچکا ہے اور اس کے اشارے مل رہے ہیں۔ لہٰذا صدر جمہوریہ سے خواہش ہے کہ بحیثیت دستوری سربراہ وہ عوام کو مشکلات سے بچائیں۔ انہوں نے کہا کہ اگر لوگ نہیں بچیں گے تو پھر کچھ نہیں ہوگا۔ انہوں نے عام آدمی سے خواہش کی کہ وہ صدائے احتجاج بلند کریں۔ اس کے لیے کچھ مشکلات ضرور ہوں گی لیکن کسی نہ کسی کو چاہئے کہ وہ بلی کے گلے میں گھنٹا باندھے۔ ممتا بنرجی نے کہا کہ ہمارے احتجاج کی وجہ سے جو مشکلات عوام کو پیش آئیں گیں ہم انہیں دور کرنے کی کوشش کریں گے۔ انہوں نے قبل ازیں نوٹ بندی پر اپنی شدید مخالفت جاری رکھتے ہوئے چیف منسٹر مغربی بنگال ممتا بنرجی نے آج کہا کہ لاکھوں عوام انتہائی سخت مشکلات سے گزر رہے ہیں۔ انہوں نے تمام تحدیدات ختم کرنے کا مطالبہ کیا۔ ممتا بنرجی نے ٹوئٹ کیا کہ ’’تحدیدات ختم ہونی چاہئے، لاکھوں افراد مشکلات سے دوچار ہیں اور اس کی وجہ ہے نوٹ بندی‘‘ انہوں نے ایک اور ٹوئٹ کیا کہ ’’مودی کے اس شرمناک فلاپ شو نوٹ بندی کے خلاف ترنمول کانگریس کی جانب سے ملک گیر احتجاج کیا جارہا ہے‘‘ ۔ ممتا بنرجی نے کہا کہ بنگال، بھوبنیشور، پنجاب ، کشن گنج (بہار)، منی پور ، تریپورہ، آسام، جھارکھنڈ اور دہلی میں آج سے تین دن تک احتجاجی دھرنا منظم کیا جائے گا۔ ترنمول کانگریس کی کارکن ریزرو بینک آف انڈیا کے دفاتر اور کئی اضلاع میں سی بی آئی دفاتر کے باہر احتجاجی مظاہرے کریں گے۔ ٹی ایم سی لیڈر اور ریاستی وزیر شبھن دیب چٹوپادھیائے نے ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ صدر ترنمول کانگریس نے انہیں ہدایت دی ہے کہ اپنا مقصد پورا ہونے تک احتجاجی مظاہرے جاری رکھیں۔ انہوں نے کہا کہ ہمارا یہ احتجاج آخری نہیں بلکہ مزید یہ سلسلہ جاری رہے گا۔ انہوں نے کہا کہ نوٹ بندی کے دو ماہ میں مغربی بنگال کی آمدنی میں 25 فیصد کمی آئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT