Monday , August 21 2017
Home / شہر کی خبریں / نوٹ بندی کیخلاف کانگریس، بائیں بازو کے احتجاجی منصوبہ پر تنقید

نوٹ بندی کیخلاف کانگریس، بائیں بازو کے احتجاجی منصوبہ پر تنقید

عوام طویل مدتی فوائد کیلئے مختصر مدتی تکلیف برداشت کرنے آمادہ : ایم وینکیا نائیڈو
حیدرآباد 27 نومبر (پی ٹی آئی) مرکزی وزیر ایم وینکیا نائیڈو نے کرنسی نوٹوں کی تنسیخ کے خلاف کانگریس اور بائیں بازو جماعتوں کے کل کے احتجاجی منصوبہ پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہاکہ وہ عوام سے کٹ گئے ہیں اور حاشیہ میں چلے گئے ہیں۔ انھوں نے اپوزیشن جماعتوں سے یہ بھی کہاکہ وہ پارلیمنٹ کی کارروائی کو بحال ہونے دیں اور بڑے نوٹوں کے چلن کو بند کرنے کے مسئلہ پر مباحث کریں جس پر عوام نے یہ واضح کردیا ہے کہ وہ طویل مدتی فائدہ کے لئے مختصر مدت کے لئے ہونے والی تکلیف کو برداشت کرنے کے لئے آمادہ ہیں۔ یہ صاف ظاہر ہے کہ کانگریس کا ’آکروش‘ حقیقی نہیں ہے کیوں کہ نوٹ بندی کے مسئلہ پر اس کی برہمی مناسب نہیں ہے۔ مرکزی وزیر اطلاعات و نشریات وینکیا نائیڈو نے کہاکہ کوئی پارٹی اس بات پر کس طرح برہمی کا اظہار کرسکتی ہے جب عوام طویل مدتی فوائد کے لئے مختصر مدتی تکلیف کو برداشت کرنے تیار ہیں۔ کانگریس عوام سے دور ہوگئی ہے اور انھیں اس طرح کے جھوٹے احتجاجی مظاہروں پر مزید بھاری قیمت چکانی پڑے گی۔ انھوں نے کہاکہ عوام کافی سمجھدار اور عقلمند ہیں اور وہ اس طرح کے سیاسی کھیلوں کو سمجھ سکتے ہیں۔ عوام کا عرصہ دراز سے یہ احساس ہے کہ بائیں بازو کی جماعتیں کبھی صحیح نہیں ہوسکتیں اس لئے وہ حاشیہ میں چلی گئی ہیں۔ مسٹر وینکیا نائیڈو 500 اور 1000 روپئے کے نوٹوں کے چلن کو بند کرنے کے حکومت کے فیصلہ کے خلاف ’’جن اکروش‘‘ (عوام کی برہمی) اور بائیں بازو جماعتوں کے ایک روزہ احتجاجی بند منصوبہ پر تبصرہ کررہے تھے۔

TOPPOPULARRECENT