Wednesday , July 26 2017
Home / ہندوستان / نکسلائٹس سے مقامی افراد کی ہمدردی ختم کرنا چیلنج: اھیر

نکسلائٹس سے مقامی افراد کی ہمدردی ختم کرنا چیلنج: اھیر

رائے پور، 5 مئی (سیاست ڈاٹ کام) مرکزی وزیر مملکت برائے داخلہ ہنس راج اھیر نے نکسلائٹس کے خلاف سخت کارروائی کا حکومت کے عزم کا اعادہ کرتے ہوئے کہا کہ متاثرہ علاقوں میں مقامی باشندوں کی نکسلائٹس کے ساتھ ہمدردی اور انہیں حاصل حمایت کو ختم کرنا بڑا چیلنج ہے ۔ مسٹر اھیر نے آج یہاں ایک نجی ہسپتال میں مہاراشٹر کے گڑھ چرولی میں کل نکسلائٹس کے حملے میں زخمی سیکورٹی فورسز کے جوانوں کی صحت جاننے کے بعد کچھ صحافیوں سے بات چیت میں کہا کہ نکسلی علاقوں میں مقامی باشندوں کا ایک بڑا طبقہ نکسلائٹس کے تئیں ہمدردی رکھتا ہے اور انہیں تعاون اور حمایت کرتا ہے ۔ انھوں نے نکسلائٹس کے خلاف حکومت کی طرف سے سخت کارروائی کے عزم کو دہراتے ہوئے کہا کہ آئندہ 8 مئی کو نئی دہلی میں وزارت داخلہ کی طرف سے طلب کردہ اعلی سطحی اجلاس میں آپریشن کو تیز کرنے کے بارے میں حکمت عملی طے کی جائے گی۔اس اجلاس میں آپریشن میں آنے والی مشکلات اور اس سے نمٹنے کے طریقہ پر بھی گفتگو ہوگی۔
ریسٹورنٹ کے شعبہ میں داخلہ ، رام دیو کا اعلان
نئی دہلی4مئی (سیاست ڈاٹ کام )یوگا گرو بابا رام دیو نے لوگوں کو لذیذ اور تغذیہ سے بھر پور کھانا فراہم کرانے کے لئے ریسٹورنٹ کے پیشہ میں بھی داخل ہونے کا اعلان کیا ہے ۔بابا رام دیو نے سالانہ پریس کانفرنس میں آج کہا کہ پتانجلی گروپ نے ابھی تک ریستوران نہیں کھولے ہیں لیکن اس میدان میں اترنے کی تیاری کی جارہی ہے ۔نہوں نے کہا کہ پتانجلی ریسٹورنٹ قائم کرنے پر غور کیا جارہا ہے جہاں لوگوں کو مزے دار اور تغذیہ سے بھر پور کھانے پیش کئے جائیں گے ۔انہوں نے کہا کہ پہلے ہی اس صنعتی گروپ نے کھانے پینے کی صنعت میں قدم رکھنے کا اعلان کیا تھا اس پر کام چل رہا ہے ۔ انہوں نے ہنستے ہوئے کہا کہ آپ کو جلد ہی پتانجلی کی جینز دیکھنے کو ملے گی۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT