Tuesday , September 26 2017
Home / Top Stories / نیتن یاہو صدر فلسطین سے ملاقات پر آمادہ

نیتن یاہو صدر فلسطین سے ملاقات پر آمادہ

یروشلم ۔ 12 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) اسرائیلی وزیراعظم بنیامین نیتن یاہو نے اس بات کا اظہار کیا ہے کہ وہ قاہرہ میں فسلطینی صدر محمود عباس اور مصر صدر عبدالفتاح السیسی کے ساتھ سہہ فریقی سربراہ اجلاس میں شرکت کے لیے تیار ہیں۔ الحدث نیوز چینل کے مطابق یہ بات انہوں نے اپنی اسرائیلی وزیر خارجہ کی اضافی حیثیت سے اتوار کے روز مصری ہم منصب سامح شکری سے ملاقات کے دوران کہی۔ شکری نے باور کرایا کہ موجودہ صورت حال کا جاری رہنا ممکن نہیں اور مصر دو ریاستی حل کو سپورٹ کرتا ہے جو مشرق وسطی کے استحکام کے لیے کارآمد ثابت ہوگا۔ یہ کوئی راز کی بات نہیں کہ اسرائیلی وزیراعظم فرانسیسی منصوبے پر ، مصر میں ایک علاقائی کانفرنس کو ترجیح دیتے ہیں۔ نیتن یاہو فرانسیسی منصوبے کو مسترد کرتے ہوئے اس کو تنازعہ کا حل مسلط کرنے کی بین الاقوامی کوشش قرار دیتے ہیں۔ سال 2007ء  کے بعد مصری وزیر خارجہ اسرائیل کا دورہ کرنے والی پہلی سرکاری شخصیت ہیں۔ یہ منصوبہ مصری صدر نے چند ہفتے پہلے متعارف کرایا جس میں انہوں نے اسرائیلی سیاسی جماعتوں پر زور دیا کہ وہ دو ریاستی حل کے حوالے سے اپنی قوتوں کو یکجا کریں۔ تاہم نیتن یاہو نے لیبر پارٹی کے بجائے حکومت میں افیگدور لیبرمین کو شامل کرلیا جو اپنی شدت پسندی کے سبب جانے جاتے ہیں۔ سامح شکری نے دو ہفتے قبل فسلطینی صدر محمود عباس سے ملاقات کی تھی۔ یہ بات واضح ہے کہ وہ اسرائیل میں صرف مذاکرات کا معاملہ زیربحث نہیں لائے بلکہ انہوں نے سیناء میں داعش کے مسئلے اور غزہ پٹی کی زمینی صورت حال کے تناظر میں اسرائیل اور ترکی کے درمیان مصالحت کے معاہدے پر بھی اپنی رائے پیش کی۔

TOPPOPULARRECENT