Friday , August 18 2017
Home / دنیا / نیدرلینڈ کا ترک وزیر اعظم کے طیارہ کو اترنے کی اجازت سے انکار

نیدرلینڈ کا ترک وزیر اعظم کے طیارہ کو اترنے کی اجازت سے انکار

ہیگ 11 مارچ ( سیاست ڈاٹ کام )  نیدرلینڈ کی حکومت نے آج ترک وزیر اعظم مولود کاسو اوگلو کے طیارہ کو نیدرلینڈ کا سفر کرنے کی اجازت دینے سے انکار کردیا ۔ مولود اوگلو روٹرڈیم شہر میں ہونے والی ایک ریلی میں شرکت کیلئے آنا چاہتے تھے ۔ نیدرلینڈ حکومت نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے بتایا کہ ترک حکام نے سر عام تحدیدات کا انتباہ دیا ہے ۔ اس کی وجہ سے کوئی واجبی حل تک پہونچنا ممکن نہیں ہوسکا ہے ۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ اسی وجہ سے نیدرلینڈ نے یہ واقف کروادینا ضروری سمجھا ہے کہ وزیر اعظم ترکی کے طیارہ کو یہاں اترنے کی اجازت نہیں دی جائیگی ۔ ترک وزرا ترکی کے لاکھوں رائے دہندوں میں مہم چلانے کیلئے یوروپ کے دورے کر رہے ہیں ۔ یہ ترک باشندے مختلف یوروپی ممالک میں موجود ہیں۔ ترکی میں 16 اپریل کو ایک ریفرینڈم ہونے والا ہے جس کے ذریعہ صدر رجب طیب اردغان کو مزید اختیارات کے تعلق سے فیصلہ ہوگا ۔ ترک وزارت خارجہ کے بموجب مولود اوگلو ابھی استنبول ہی میں تھے جب نیدرلینڈ حکام نے اعلان کردیا کہ وہ ان کے طیارہ کو وہاں اترنے کی اجازت نہیں دینیگ۔ حکومت نے اپنے بیان میں کہا تھا کہ نیدرلینڈ کو موجودہ واقعات اور حالات پر افسوس ہے اور وہ ترکی کے ساتھ بات چیت کی وکالت ہنوز کرتی ہے ۔ نیدرلینڈ ایسا ملک ہے جہاں تقریبا چار لاکھ ترک نژاد افراد رہتے بستے ہیں۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ حکومت نیدرلینڈ کو اپنے ملک میں عوام کو جمع کرتے ہوئے ترکی میں ہونے والے ریفرینڈ م کے تعلق سے تشہیر کئے جانے پر کوئی اعتراض نہیں ہے ۔ تاہم حکومت نے کہا کہ اس طر ح کی ریلیوں کے انعقاد کے ذریعہ ملک میں سماجی کشیدگی پیدا کرنے کی اجازت نہیں دی جاسکتی ۔ جو لوگ تشہیر کرنا چاہتے ہیں انہیں قوانین کی پابندی کرنی چاہئے ۔

TOPPOPULARRECENT