Friday , August 18 2017
Home / سیاسیات / نیشنل ہیرالڈمقدمہ :کانگریس مخالف مہم کا فیصلہ، پارلیمنٹ کارروائی معطل

نیشنل ہیرالڈمقدمہ :کانگریس مخالف مہم کا فیصلہ، پارلیمنٹ کارروائی معطل

نئی دہلی ۔ 9 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) پارلیمنٹ میں آج نیشنل ہیرالڈ کے مسئلہ پر کانگریس کے احتجاج کی وجہ سے کوئی کارروائی نہیں ہوسکی۔ بعدازاں مرکزی کابینہ کا اجلاس منعقد کیا گیا جس میں مرکزی وزراء نے احساس ظاہر کیا کہ احمد قانون سازیاں بشمول جی ایس ٹی بل اب برخاست کردیئے جائیں گے اور پارلیمنٹ کے سرمایہ اجلاس کے بعد اپوزیشن پارٹی کانگریس کے خلاف ملک گیر مہم کا آغاز کیا جائے گا۔ اجلاس میں مرکزی وزراء ارون جیٹلی اور وینکیا نائیڈو نے وزیراعظم مودی کو مقدمہ کی تفصیلات سے واقف کروایا۔ وزراء نے متفقہ طور پر کانگریس مخالف ملک گیر سیاسی مہم چلانے کا ارادہ ظاہر کیا۔ کابینہ کے اجلاس کی صدارت وزیراعظم نے کی۔ بعدازاں وینکیا نائیڈو کی زیرصدارت این ڈی اے کا ایک اجلاس منعقد ہوا جس میں کابینہ کے کانگریس مخالف ملک گیر مہم کے فیصلہ کی تائید کی گئی۔ دریں اثناء آج پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں میں کوئی کارروائی نہیں ہوسکی کیونکہ کانگریس ارکان مسلسل شوروغل کرہے تھے۔ اسی شوروغل کے دوران ایک اہم مسودہ قانون منظور کیا گیا اور اہم کارروائی بھی انجام دی گئی۔ خشک سالی کی صورتحال پر مباحث منعقد کئے گئے۔ ایوان کے وسط میں کانگریس اور ترنمول کانگریس کے ارکان حکومت مخالف نعرہ بازی میں مصروف رہے۔ سماج وادی پارٹی، بی جے پی، آر جے ڈی، ٹی آر ایس، وائی ایس آر سی پی، بی جے پی، ایس اے ڈی ، شیوسینا اور تلگودیشم اجلاس میں شریک تھے۔

TOPPOPULARRECENT