Sunday , September 24 2017
Home / ہندوستان / نیشنل ہیرالڈ کیس میں مزید دستاویزات کی طلبی

نیشنل ہیرالڈ کیس میں مزید دستاویزات کی طلبی

عدالت میں بی جے پی لیڈر ڈاکٹر سبرامنیم سوامی کی عرضی قبول
نئی دہلی ۔ 11 ۔ جنوری (سیاست ڈاٹ کام) دہلی کی ایک عدالت نے آج نیشنل ہیرالڈ کیس میں وزارت فینانس ، شہری ترقیاتی اور کارپوریٹ امور انکم ٹیکس ڈپارٹمنٹ اور ایجنسیوں سے دستاویزات سے طلب کرنے کیلئے بی جے پی لیڈر ڈاکٹر سبرامنیم سوامی کی عرضی کو قبول کرلیا ہے ۔ میٹرو پالیٹن مجسٹریٹ نے سبرامنیم سوامی کو ہدایت دی کہ مذکورہ محکموں بشمول دہلی ڈیولپمنٹ اتھاریٹی اور رجسٹرر آف کمپنیز کو سمن جاری کرنے کیلئے پراسیسنگ فیس ادا کریں۔ ڈاکٹر سوامی نے عدالت سے کہا کہ یقیناً ان کے (وزارتوں اور ایجنسیوں) پاس ڈاکومینٹس موجود ہیں لیکن میں نہیں جانتا کہ کس نوعیت کے دستاویزات ہیں اور یہ ڈاکومینٹس عدالت میں طلب کئے جاسکتے ہیں۔ مجسٹریٹ نے کہا کہ آپ کی عرضی قبول کرلی گئی ہے، لہذا آپ (سوامی) پراسیس فیس ادا کردیں۔ قبل ازیں عدالت نے 19 ڈسمبر 2015 کو صدر کانگریس سونییا گاندھی اور ان کے فرزند راہول گاندھی اور دیگر 3 قائدین موتی لال وورا ، آسکر فرنانڈیز اور سمن دوبے کی درخواست ضمانت منظور کردی تھی جو کہ سمن کی اجرائی پر حاضر ہوئے تھے ۔ تاہم ایک اور ملزم سام پیٹروڈا کی طبی بنیادوں پر صرف اس دن کیلئے شخصی حاضری سے استثنیٰ دیدیا گیا تھا ۔ یہ کیس ڈاکٹر سبرامنیم سوامی کی شکایت پر درج کیا گا جس میں مذکورہ لیڈروں کے خلاف دھوکہ دہی ، سازش اور مجرمانہ اعتماد شکنی کا الزام عائد کیا گیا ہے ۔ کیس کی سماعت کے دوران آج ڈاکٹر سوامی نے عدالت کو مطلع کیا کہ انہوں نے عدالتی احکامات کے مطابق ملزمین کو شکایت اور ضمیمہ کی کاپیاں روانہ کردیں لیکن اسے قبول کرنے سے انکار کردیا گیا اور یہ عذرپیش کیا کہ یہ نامکمل ہے ۔ میں نہیں جانتا کہ کیا نامکمل ہے اور ہم نے تو صرف عدالتی احکامات کی تعمیل کی ہے ۔ اگر وہ (کانگریس لیڈرس) بتائیں کہ کس بات کی کمی ہے تو اسے مکمل کرلیا جائے گا جکس پر عدالت نے کہا کہ تم (سوامی) بذریعہ پوسٹ دوبارہ ان کے دفاتر کو روانہ کریں۔ اس خصوص میں مزید دستاویزات طلب کرتے ہوئے ڈاکٹر سوامی نے ایک اور عرضی داخل کی ہے۔

TOPPOPULARRECENT