Sunday , September 24 2017
Home / دنیا / نیوکلئیر پروگرام مکمل کیا جائیگا ‘ ہم امریکہ کی برابری کے قریب

نیوکلئیر پروگرام مکمل کیا جائیگا ‘ ہم امریکہ کی برابری کے قریب

آئندہ دنوں میں مزید مزائیل تجربات کئے جائیں گے ۔ شمالی کوریائی لیڈر کم جونگ ان کا اعلان
سیول 16 ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) شمالی کوریا کے لیڈر کم جونگ ان نے کہا کہ ان کا ملک فوجی طاقت کے معاملہ میں امریکہ سے برابری کے نشانہ کے قریب پہونچ رہا ہے جبکہ اقوام متحدہ سلامتی کونسل کی جانب سے شمالی کوریا کے انتہائی اشتعال انگیز بیالسٹک میزائیل تجربہ کی مذمت کی گئی ہے ۔ شمالیک وریا کی سرکاری کوریائی سنٹرل نیوز ایجنسی نے کم جون ان کے ریمارکس جاری کئے ہیں جبکہ کل ہی امریکہ اور جنوبی کوریا کی افواج نے شمالی کوریا سے میزائیل داغے جانے کا پتہ چلایا تھا ۔ اس میزائیل نے 3,700 کیلومیٹر کا فاصلہ طئے کیا تھا اور جاپان کے اوپر سے گذر کر یہ شمالی بحر اوقیانوس میں جا گرا تھا ۔ شمالی کوریا کا یہ طویل ترین بیالسٹک میزائیل تجربہ تھا ۔ شمالی کوریا نے بھی اس میزائیل ترجبہ کی توثیق کی تھی ۔ اسی طرح کے ایک ماڈل کا 29 اگسٹ کو بھی تجربہ کیا گیا تھا ۔ سرکاری خبر رساں ادارے کے بموجب کم جون ان نے اس میزائیل تجربہ پر زبردست اطمینان کا اظہار کیا اور کہا کہ اس تجربہ سے ملک کی تیاری کو موثر بنانے اور میزائیلوں پر انحصار کرنے میں اضافہ ہوگا اور یہ در اصل ملک کی فوجی طاقت میں اضافہ کرنے کی کوششوں کی کامیابی ہے ۔ اس بیان کے انگریزی چربہ میں زیادہ کچھ اظہار خیال نہیں رہا ہے جبکہ کوریائی زبان کی نقل میں کم جون ان کا یہ اعلان کرتے ہوئے حوالہ دیا گیا کہ یہ میزائیل آپریشنل تیاری کی حالت میں بھی آگیا ہے ۔ انہوں نے اپنے نیوکلئیر ہتھیاروں کے پروگرام کو مکمل کرنے کے عزم کا بھی اظہار کیا ۔ شمالی کوریا کو اپنے نیوکلئیر پروگرام کی وجہ سے سخت معاشی تحدیدات کا سامنا ہے ۔

کم جونگ ان نے مزید کہا کہ ان کا ملک لا محدود بین الاقوامی تحدیدات کے باوجود فوجی طاقت کے معاملہ میں امریکی سے برابری کے نشانہ کے قریب پہونچ رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ان تحدیدات کے باوجود ملک نیوکلئیر ہتھیاروں کی طاقت بنانے کے قریب پہونچ گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کی جانب سے یہ تمام کوششیں ہونی چاہئیں کہ اس نشانہ کو پورا کیا جاسکے اور امریکہ پر جوابی نیوکلئیر حملہ کرنے کی صلاحیت پیدا ہوجائے ۔ ایجنسی نے کم جون ان کا یہ کہتے ہوئے حوالہ دیا کہ جیسا کہ ساری دنیا مانتی ہے کہ ہم نے اقوام متحدہ کی تحدیدات کے باوجود یہ کامیابیاں حاصل کی ہیں ۔ یہ تحدیدات شمالی کوریا پر کئی دہوں سے عائد ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ان کے ملک کا قطعی مقصد یہی ہے کہ حقیقی طاقت کے معاملہ میں امریکہ کی برابری کا موقف حاصل کیا جائے اور امریکی حکمرانوں کو مجبور کیا جائے کہ وہ شمالی کوریا کے خلاف فوجی امکانات کے تعلق سے بات کرنے کی ہمت نہ کریں۔ کم جونگ ان نے کہا کہ آئندہ دنوں میں مزید تجربات ہونے والے ہیں اور آئندہ سے جو بھی فوجی مشقیں ہونگی وہ با معنی اور پریکٹیکل ہونگی ۔ ان کا مقصد نیوکلئیر طاقت کی لڑائی کی صلاحیتوں میں اضافہ ہونا چاہئے ۔ جاپان کے اوپر سے میزائیل تجربہ کرنے سے قبل شمالی کوریا نے انتباہ دیا تھا کہ وہ امریکی جزیرہ گوام کو اپنے میزائیل سے نشانہ بنائیگا ۔ امریکہ نے بھی شمالی کوریا کے اس میزائیل تجربہ کی شدید مذمت کی ہے اور کہا کہ امریکہ اس کے خلاف مختلف امکانات کا جائزہ لے رہا ہے ۔ اقوام متحدہ سلامتی کونسل کی جانب سے بھی ان میزائیل تجربات کی شدید مذمت کی گئی ہے اور کہا گیا ہے کہ یہ تجربے انتہائی اشتعال انگیز ہیں۔

ایران نیوکلیائی معاہدہ سے امریکہ وابستہ رہے : روس
اقوام متحدہ۔ 16ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) اقوام متحدہ میں روسی سفیر والسی نبیجیا نے کہاکہ آئندہ ہفتہ اقوام متحدہ جنرل اسمبلی میٹنگ سے علیحدہ ایران نیوکلیائی معاہدہ پر ہونے والی ممکنہ میٹنگ کے دوران روس امریکہ کو معاہدہ سے وابستہ رہنے کہے گا ۔ نبیجیا نے کہا کہ صرف روس ہی نہیں بلکہ دیگر ممالک بھی چاہتے ہیں کہ امریکہ اس معاہدہ سے وابستہ رہے ۔

TOPPOPULARRECENT