Wednesday , June 28 2017
Home / Top Stories / نیٹ نتائج کی اشاعت پر ہائیکورٹ کا عبوری حکم التواء

نیٹ نتائج کی اشاعت پر ہائیکورٹ کا عبوری حکم التواء

نئی دہلی ۔ 24 مئی (سیاست ڈاٹ کام) مدراس ہائیکورٹ کی مدھورائی بنچ نے نیٹ یوجی امتحان کے نتائج پرجو 8 جون کو شائع کئے جانے والے تھے، 7 مئی کو عبوری حکم التواء جاری کردیا کیونکہ مختلف زبانوں میں سوالات کے پرچے پر تنازعہ پیدا ہوگیا ہے۔ مدراس ہائیکورٹ نے سی بی ایس ای کی جانب سے NEET کے نتائج کے اعلان پر حکم التواء جاری کیا جبکہ ایک میڈیکل طالب علم نے الزام عائد کیا کہ سوالات کے پرچے مختلف زبانوں میں یکساں نہیں تھے۔ بعض زبانوں اور ریاستوں میں سوالات کے پرچے آسان تھے۔ ہائیکورٹ نے ایم سی آئی، سی  بی ایس سی اور مرکزی وزارت صحت کو ہدایات جاری کیں کہ 7 جون کو نیٹ کے مسئلہ پر جوابی حلف نامہ داخل کیا جائے۔ ہائیکورٹ میں پیر کے دن سی بی ایس ای کا موقف دریافت کیا تھا جبکہ ایک درخواست میں اس امتحان کو منسوخ کرنے کی گذارش کرتے ہوئے انتخاب پر مختلف اعتراضات کئے گئے تھے۔ یہ امتحان انڈر گریجویٹ، میڈیکل اور ڈینٹل کورسیس کے امیدواروں کو منتخب کرنے منعقد کیا جاتا ہے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT