Friday , September 22 2017
Home / شہر کی خبریں / وائی ایس آر کانگریس کا بلدیہ انتخابات سے دوری کا امکان

وائی ایس آر کانگریس کا بلدیہ انتخابات سے دوری کا امکان

پارٹی کیڈر کا قیادت پر دباؤ، ایک یا دو دن میں اعلان متوقع

حیدرآباد /10 جنوری (سیاست نیوز) وائی ایس آر کانگریس کی جانب سے جی ایچ ایم سی انتخابات میں حصہ لینے کے کوئی آثار نظر نہیں آرہے ہیں۔ ایک دو دن میں پارٹی قیادت کی جانب سے اعلان کرنے کا امکان ہے، تاہم پارٹی کیڈر مقابلہ کے لئے قیادت پر دباؤ ڈال رہا ہے۔ حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کی انتخابی تیاریوں کا تمام سیاسی جماعتوں نے آغاز کردیا ہے، ہر پارٹی کے دفتر پر چہل پہل بڑھ گئی ہے اور ٹکٹوں کے حصول کے لئے پارٹی قائدین کی دوڑ دھوپ بھی شروع ہو گئی ہے۔ ہر پارٹی ایک دوسرے پر سبقت لے جانے کی کوشش کر رہی ہے۔ بڑے بڑے ہورڈنگس، فلیکسی، بیانرس اور پوسٹرس کے ذریعہ سیاسی جماعتیں اپنے اپنے کارناموں کو عوام کے سامنے پیش کر رہی ہیں اور عوامی توجہ حاصل کرنے کے لئے ایک دوسرے کو تنقید کا نشانہ بنا رہی ہیں، تاہم وائی ایس آر کانگریس کے دفتر پر ایسی کوئی سرگرمی نہیں نظر آرہی ہے۔ ایک ہفتہ قبل سربراہ وائی ایس آر کانگریس جگن موہن ریڈی کی بہن مسز شرمیلا نے شہر میں پرسہ یاترا کرتے ہوئے سابق چیف منسٹر ڈاکٹر راج شیکھر ریڈی پر جان نچھاور کرنے والوں کے افراد خاندان سے ملاقات کرکے انھیں پرسہ دیا تھا۔ اس وقت سیاسی حلقوں میں یہ تصور کیا جا رہا تھا کہ شاید اس پروگرام کے پس پردہ وائی ایس آر کانگریس جی ایچ ایم سی انتخابات کی تیاری کر رہی ہے، تاہم پرسہ یاترا ختم ہونے کے بعد بھی پارٹی سیاسی منظر سے غائب رہی۔ تین دن قبل انتخابی شیڈول جاری ہو گیا اور ایک دو دن میں انتخابی اعلامیہ بھی جاری ہونے والا ہے، تاہم وائی ایس آر کانگریس نے اب تک مقابلہ کا اعلان نہیں کیا، جس سے پارٹی کیڈر میں مایوسی پائی جا رہی ہے اور پارٹی قائدین قیادت پر مقابلہ کے لئے دباؤ ڈال رہے ہیں۔ کانگریس کے ٹکٹ پر کامیاب ہونے والے کئی کارپوریٹرس وائی ایس آر کانگریس میں شامل ہو گئے تھے۔ گریٹر حیدرآباد کے حدود میں سیٹلرس کی کثیر تعداد میں موجود ہے، اس کے باوجود مقابلہ نہ کرنے کی وجہ سے وہ اپنے مستقبل کو لے کر پریشان ہیں۔ ذرائع نے بتایا کہ جگن موہن ریڈی نے جی ایچ ایم سی انتخابات کے لئے سروے کروایا ہے، جس میں پارٹی کے لئے سازگار ماحول نہ ہونے کی رپورٹ وصول ہوئی ہے، جس کی وجہ سے وہ پارٹی کے وقار کو متاثر نہیں کرنا چاہتے۔ ذرائع نے بتایا کہ  اگر ایک دو دن میں صدر تلنگانہ وائی ایس آر کانگریس و رکن پارلیمنٹ پی سدھاکر ریڈی پارٹی کی جانب سے جی ایچ ایم سی انتخابات میں حصہ نہ لینے کا اعلان کرتے ہیں تو پارٹی کا کیڈر متاثر ہوسکتا ہے، تاہم ایک دو دن میں واضح ہو جائے گا کہ وائی ایس آر کانگریس کا موقف کیا ہے؟۔

TOPPOPULARRECENT