Monday , August 21 2017
Home / ہندوستان / وادی میں تازہ جھڑپیں، نوجوان ہلاک،علحدگی پسندوں کا یوم سیاہ

وادی میں تازہ جھڑپیں، نوجوان ہلاک،علحدگی پسندوں کا یوم سیاہ

سرینگر ۔ 15 ۔ اگست (سیاست ڈاٹ کام) کشمیر میں احتجاجی عوام اور سیکوریٹی فورسس کے مابین تازہ جھڑپوں میں ایک نوجوان ہلاک اور ایک زخمی ہوگیا۔ اس طرح اب تک مرنے والوں کی تعداد 58 ہوچکی ہے۔ وادی کشمیر کے کئی حصوں میں کرفیو برقرار ہے۔ پولیس عہدیدار نے بتایا کہ شہر کے بتمالو علاقہ میں ہوئی ایک جھڑپ میں نوجوان زخمی ہوگیا، جسے ایس ایم ایچ ایس ہاسپٹل لایا گیا تھا۔ ڈاکٹرس نے اسے مردہ قرار دیا۔ اس کی شناخت ہنوز نہیں ہوپائی ہے ۔ اننت ناگ کے بیچ بہارا میں ایک نوجوان آنسو گیس کا شیل سر سے ٹکرانے کے باعث زخمی ہوگیا۔ قبل ازیں ایک نوجوان جو گزشتہ ہفتہ جھڑپوں میں زخمی ہوا تھا ، آج صبح زخموں سے جانبر نہ ہوسکا۔  پرانے شہر کے پانچ پولیس اسٹیشن حدود اور سرینگر کے حضرت بل زون کے علاوہ اننت ناگ میں احتیاطی اقدام کے طور پر کرفیو برقرار رکھا گیا ہے ۔ اس کے علاوہ کشمیر کے مابقی حصہ میں تحدیدات عائد ہے ۔ سید علی شاہ گیلانی ، میر واعظ عمر فاروق اور محمد یسین ملک کی زیر قیادت علحدگی پسند کیمپ نے عوام سے ’’یوم سیاہ‘‘ منانے کی اپیل کی اور کہا کہ وہ اپنی عمارتوں پر سیاہ پرچم لہرائیں۔ اپوزیشن جماعتوں نیشنل کانفرنس اور کانگریس نے وادی میں جاری تشدد اوربدامنی پربطور احتجاج بخشی اسٹیڈیم میں منعقدہ یوم آزادی تقریب کا بائیکاٹ کیا۔

TOPPOPULARRECENT