Monday , August 21 2017
Home / ہندوستان / وجئے مالیا کی عدالت میں حاضری یقینی بنائی جائے

وجئے مالیا کی عدالت میں حاضری یقینی بنائی جائے

وزارت داخلہ کو سپریم کورٹ کا حکم ، تحقیر عدالت پر سزا کی نوعیت کا 10 جولائی کو فیصلہ
نئی دہلی۔ 10 مئی (سیاست ڈاٹ کام)سپریم کورٹ نے آج مرکزی وزارت داخلہ کو ہدایت دی ہے کہ وہ 10 جولائی کو وجئے مالیا کی عدالت میں حاضری یقینی بنائے جبکہ تحقیر عدالت پر سزا کے تعین کی سماعت ہوگی۔ وجئے مالیا اس وقت برطانیہ میں موجود ہیں۔ عدالت نے انہیں اپنے اثاثہ جات کی تفصیلات کا انکشاف کرنے کے سلسلے میں دیئے گئے احکامات کی تعمیل نہ کرنے پر تحقیر عدالت کا مرتکب قرار دیا گیا۔ اس کے علاوہ انہوں نے برطانوی فرم ڈائیگیو سے موصولہ 40 ملین ڈالرس کی رقم اپنے تین بچوں کے نام منتقل کرتے ہوئے کرناٹک ہائیکورٹ کے احکامات کی خلاف ورزی کی ہے۔ ہندوستان نے حال ہی میں برطانیہ سے وجئے مالیا کی حوالگی پر زور دیا تھا۔ ہندوستانی تاجر کنگ فشر ایرلائینس سے متعلق 9 ہزار کروڑ روپئے سے زائد بینک قرض نادہندہ کے طور پر بھی ملزم ہیں۔ یہ کمپنی اب بند کردی گئی ہے۔جسٹس آدرش کمار گوئل اور جسٹس ادئے اومیش للت پر مشتمل بینچ نے بتایا کہ ہم نے وزارت امور داخلہ کو اس بات کی ہدایت دی ہے کہ وہ 10 جولائی کو وجئے مالیا کی عدالت میں حاضری یقینی بنائیں۔ اس فیصلے کی ایک نقل وزارت امور داخلہ کو تعمیل کیلئے روانہ کی جارہی ہے۔ بینچ نے یہ احساس ظاہر کیا ہے کہ وجئے مالیا نے تحقیر عدالت مقدمہ میں کوئی جواب نہیں دیا اور شخصی طور پر حاضر بھی نہیں ہوئے لہذا انہیں تحقیر عدالت کا مرتکب پایا گیا۔ ہم یہ ضروری سمجھتے ہیں کہ انہیں ایک اور موقع دیا جائے اور مجوزہ سزا کے بارے میں ان سے پوچھا جائے۔
پینٹگان میں وائی فائی ، سپریم کورٹ میں کیوں نہیں؟
نئی دہلی۔ 10 مئی (سیاست ڈاٹ کام) سپریم کورٹ کے تیسرے سینئر ترین جج جسٹس جے چلمیشور نے کہا کہ امریکی ڈپارٹمنٹ آف ڈیفنس کے ہیڈکوارٹر پینٹگان میں وائی فائی سہولت فراہم ہوسکتی ہے لیکن سپریم کورٹ میں کیوں نہیں۔ انہوں نے جاننا چاہا کہ اس طرح کی سہولت فراہم کرنے میں کیا مشکل درپیش ہے۔ وہ آج سپریم کورٹ میں منعقدہ ایک تقریب سے خطاب کررہے تھے۔

TOPPOPULARRECENT