Wednesday , September 20 2017
Home / سیاسیات / وجئے ملیا حکومت کی فئیر اینڈ لولی اسکیم کے تحت ملک سے فرار

وجئے ملیا حکومت کی فئیر اینڈ لولی اسکیم کے تحت ملک سے فرار

ملیا اور للت مودی کو وطن واپس لانے مودی حکومت سے مطالبہ ۔ کانگریس ترجمان سرجیوالا و پونیا کا بیان

نئی دہلی 14 مارچ ( سیاست ڈاٹ کام ) وجئے ملیا مسئلہ پر حکومت کو تنقیدوں کا نشانہ بنانے کا سلسلہ جاری رکھتے ہوئے کانگریس نے آج حکومت سے سوال کیا کہ آیا وہ برطانیہ سے ملیا کے اخراج کی کوشش کریگی یا پھر حوالگی کیلئے کوشش کرتے ہوئے اس مسئلہ کو سردخانہ کی نذر کردیا جائیگا ۔ کانگریس نے کہا کہ حکومت نے للت مودی مسئلہ کو سرد خانہ کی نذر کردیا تھا ۔ کانگریس کے ترجمان رندیپ سرجیوالا اور ترجمان پی ایل پونیا نے وزیراعظم نریندر مودی سے سوال کرتے ہوئے کہا کہ کیا حکومت وجئے ملیا کے انگلینڈ سے اخراج کی کوشش کریگی تاکہ 9,091 کروڑ روپئے کو جلد از جلد واپس وصول کیا جاسکے ۔ انہوں نے سوال کیا کہ آیا حکومت اس مسئلہ کو پیچیدہ راستہ اختیار کرتے ہوئے حوالگی کیلئے کوشش کریگی جیسا کہ اس نے للت مودی کے مسئلہ میں کیا تھا ۔ مرکز کا مضحکہ اڑاتے ہوئے سرجیوالا نے الزام عائد کیا کہ وجئے ملیا بی جے پی حکومت کی فئیر اینڈ لولی اسکیم کے تحت ملک سے فرار ہوگئے ہیں ۔ وہ حقیقی معنوں میں دورہ این آر آئی ہوگئے ہیں۔ ایک نان ری پیئنگ انڈین اور دوسرے نان ریٹرنگ انڈین ۔ انہوں نے ادعا کیا کہ اندرون 100 دن کالا دھن واپس لانے کا وعدہ پورا کرنے کی بجائے گذشتہ 22 مہینوں میں مودی حکومت کا ریکارڈ یہ ہے کہ کہ پہلیللت مودی اور پھر اب وجئے ملیا بیرون ملک فرار ہوگئے ہیں۔ ایک مشترکہ بیان میں کانگریس قائدین نے وزیر اعظم سے یہ جاننا چاہا کہ آیا وجئے ملیا نے اپنی اچانک بیرون ملک روانگی سے قبل وزیر فینانس سے ملاقات اور تبادلہ خیال تو نہیں کیا تھا ۔ انہوں نے سوال کیا کہ آیا وزیر فینانس نے اس تفصیل سے وزیر اعظم کو واقف کروایا تھا ۔ کیا وزیر اعظم اس بات چیت کو پارلیمنٹ اور ہندوستان کے عوام کے سامنے پیش کرینگے ؟ ۔ انہوں نے کہا کہ وہ مودی حکومت سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ صرف زبانی بات چیت سے اوپر اٹھتے ہوئے حقیقت کا سامنا کرے ۔ ہم چاہتے ہیں کہ اس فئیر اینڈ لولی اسکیم کو ختم کیا جائے ۔ علاوہ ازیں راجیہ سبھا میں بھی کانگریس ارکان نے وجئے ملیا کا مسئلہ اٹھایا اور مطالبہ کیا کہ صنعتکار کو سابق آئی پی ایل سربراہ للت مودی کے ساتھ ہندوستان واپس لایا جائے ۔ کانگریس ارکان نے ایوان کے وسط میں پہونچتے ہوئے نعرے لگائے ۔ کانگریس رکن پرمود تیواری نے یہ مسئلہ اٹھایا تھا اور کہا تھا کہ وجئے ملیا کو بی جے پی کی مدد سے راجیہ سبھا کیلئے کامیابی حاصل ہوئی تھی ۔ نائب صدر نشین پی جے کورین نے کہا کہ تیواری کی نوٹس کو صدر نشین حامد انصاری نے قبول نہیں کیا ہے ۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ اس مسئلہ کو راجیہ سبھا کی اقدار کمیٹی سے رجوع کیا جائیگا تاہم کانگریس ارکان وجئے ملیا ۔ للت مودی کو واپس لاؤ کے نعرے لگاتے رہے ۔ دوسرے ارکان نے بھی ان کا ساتھ دیا ۔

TOPPOPULARRECENT