Saturday , September 23 2017
Home / Top Stories / ورجینیا میں مسلم لڑکی کا اغواء اور قتل، ملزم گرفتار

ورجینیا میں مسلم لڑکی کا اغواء اور قتل، ملزم گرفتار

واشنگٹن ۔ 19 جون (سیاست ڈاٹ کام) فیئرفیکس کاؤنٹی پولیس نے اطلاع دی ہے کہ اتوار کی رات گئے ورجینیا کے شہر اسٹرلنگ سے اغوا ہونے والی 17 برس کی لڑکی، نبرہ حسنین کی لاش ایک تالاب سے برآمد ہوئی ہے۔بتایا جاتا ہے کہ اغوا کا واقع اْس وقت پیش آیا جب رات دو بجے چند سہیلیاں اسٹرلنگ کے ڈرینس ویل روڈ کے علاقے سے جا رہی تھیں، جب قریب سے گزرنے والی ایک کار کے ڈرائیور اور اْن کی آپس میں تلخ کلامی ہوئی۔ ڈرائیور نے مبینہ طور پر نبرہ پر حملہ کیا اور اْنھیں گھسیٹ کر گاڑی میں ڈالا۔’ایڈمز سینٹر‘ کے مطابق، رپورٹ ملتے ہی فوری طور پر لؤڈن کاؤنٹی اور فیئرفیکس کاؤنٹی کے اہل کاروں سے رابطہ کیا گیا اور واقع کی تفصیلی رپورٹ درج کرائی گئی، جس کے بعد پولیس نے لاپتا لڑکی کی تلاش کا کام شروع کیا۔ذرائع کے مطابق، لاش کا پوسٹ مارٹم کیا جا رہا ہے، جس کے بعد ہی ہلاکت کے اصل اسباب معلوم ہو سکیں گے۔پولیس کے مطابق، تالاب کے قریب سے ایک بیٹ ملا ہے، جسے آلہ قتل بتایا جا رہا ہے؛ جب کہ مبینہ ملزم کو حراست میں لیا گیا ہے، جن کا نام 22 سالہ ڈارون مارٹنیز ٹوریز بتایا جا رہا ہے، جو اسٹرلنگ کا ہی مکین ہے۔بقول پولیس ’’ٹوریز پر قتل کا الزام عائد کیا گیا ہے‘‘۔ایک بیان میں، ’ایڈمز سینٹر مسجد‘ کی انتظامیہ نے کہا ہیکہ ’’اغوا اور قتل کے واقعے پر برادری کو سخت صدمہ پہنچا ہے‘‘۔متاثرہ خاندان کی مدد کے لیے، مسلمان راہنماؤں نے ایک فنڈ قائم کیا ہے جس میں، بتایا جاتا ہے کہ، ’’اب تک 20000 ڈالر سے زیادہ رقوم اکٹھی ہو چکی ہیں‘‘۔

TOPPOPULARRECENT