Wednesday , September 27 2017
Home / Top Stories / ورلڈ الیون کے خلاف پاکستان 20 رنز سے فاتح

ورلڈ الیون کے خلاف پاکستان 20 رنز سے فاتح

 

سخت سیکورٹی کے باوجود میدان میں شائقین کا جوش و خروش

لاہور۔13 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام ) پاکستان نے ا?زادی کپ کے پہلے ٹی ٹوئنٹی میچ میں ورلڈ الیون کو 20 رنز سے شکست دے کر سیریز میں 1-0 کی برتری حاصل کر لی۔لاہور میں قذافی اسٹیڈیم میں کھیلے گئے پہلے ٹی20 میچ میں ورلڈ الیون کے کپتان فاف ڈیو پلیسی نے ٹاس جیت کر پہلے پاکستان کو بیٹنگ کی دعوت دی۔پاکستان کی جانب سے فخر زمان نے دو چوکے لگا کر جارحانہ انداز میں اننگز کا آغاز کیا لیکن اسی اوور میں مورنی مورکل نے سلیپ میں ہاشم آملہ کے ہاتھوں اوپنر کو پویلین کی راہ دکھائی ۔اس کے بعد احمد شہزاد اور بابر اعظم نے 122 رنز کی عمدہ شراکت قائم کر کے ابتدائی نقصان کا ازالہ کرنے کے علاوہ ٹیم کے بڑے اسکور کی راہ ہموار کی۔احمد شہزاد 39 رنز بنانے کے بعد بین کٹنگ کی گیند پر ڈیرن سیمی کو وکٹ دے بیٹھے۔بابر اعظم نے 86 رنز کے ساتھ ٹی20 کیریئر کی بہترین اننگز کھیلی اور بڑا شاٹ کھیلنے کی کوشش میں عمران طاہر کی واحد وکٹ بنے۔اختتامی اوورز میں شعیب ملک اور عماد وسیم کی جارحانہ بیٹنگ کی بدولت پاکستان نے مقررہ اوورز میں پانچ وکٹ کے نقصان پر 197 رنز بنائے، شعیب نے 38 اور عماد نے 15 رنز بنائے۔ورلڈ الیون کی جانب سے سری لنکا سے آئے تھسارا پریرا دو وکٹیں لے کر سب سے کامیاب بولر رہے لیکن اس کیلئے انہیں 51 رنز کی پٹائی برداشت کرنا پڑی۔ ورلڈ الیون نے ہمالیائی اسکور کے تعاقب میں شاندارآغاز کیا اور پہلی وکٹ کے لئے ہاشم آملہ اورتمیم اقبال نے 5.2 اوورس میں 43 رنزبنائے اور اس موقع پر تمیم 18 رنز بناکر آؤٹ ہوئے۔مہمان ٹیم ابھی اس نقصان سے سنبھلی بھی نہ تھی کہ ہاشم آملا بھی رومان کو وکٹ دے بیٹھے۔وہ آؤٹ ہونے سے قبل 17 گیندوں میں 4 چوکوں اور ایک چکھے پر مشتمل اپنی اننگز میں 26 رنز بنائے۔ ٹم پین اور فاف ڈیو پلیسی نے ذمے دارانہ بیٹنگ کرتے ہوئے ٹیم کی سنچری مکمل کرائی لیکن ایک ایسے موقع پر جب دونوں کھلاڑی بالکل سیٹ نظر آ رہے تھے، ڈپو پلیسی 29 رنز بنانے کے بعد شاداب خان کا شکار بن گئے۔

ڈیوڈ ملر نے شاداب کو چھکا لگا کر خطرناک عزائم ظاہر کرنے کی کوشش کی لیکن اگلی ہی گیند پر دوبارہ بڑا شاٹ کھیلے کی کوشش میں اسٹمپ ہو گئے۔گرانٹ ایلیٹ کی اننگز بھی 14 رنز تک محدود رہی اور وہ سہیل کی دوسری وکٹ بنے۔اختتامی اوورز میں ڈیرن سیمی کی جارحانہ بیٹنگ کے باوجود ورلڈ الیون مقررہ اوورز میں سات وکٹوں کے نقصان پر 177 رنز بان سکی ۔پاکستان کی جانب سے شاداب، سہیل اور رومان نے فی کس دو وکٹیں حاصل کیں۔بابر اعظم کو فتح گر اننگز کھیلنے پر میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔میچ کے آغاز سے قبل ورلڈ الیون کے کپتان فرینکوئس ڈیو پلیسی نے کہا کہ ورلڈ الیون کی قیادت کرنا اعزاز ہے اور پاکستان میں کرکٹ کی بحالی میں کردار ادا کرنے پر خوشی ہے۔کپتان سرفراز احمد نے کہا کہ گھریلوں میدانوں پر کھیلنے کیلئے پرجوش ہیں اور نوجوان کھلاڑیوں کے پاس ہوم گراؤنڈ پر کارکردگی دکھا کر داد و تحسین سمیٹے کا سنہری موقع ہے۔ انتہائی سخت ترین سیکوریٹی میں اسٹیڈیم آمد کے بعد کھلاڑیوں کو لاہور کی ثقافت کی علامت کے طور پر خصوصی طور پر تیار کردہ رکشوں میں بٹھا کر اسٹیڈیم کا چکر لگوایا گیا۔

TOPPOPULARRECENT