Friday , August 18 2017
Home / ہندوستان / وزارت داخلہ کے متنازعہ عہدیدار معطل

وزارت داخلہ کے متنازعہ عہدیدار معطل

نئی دہلی۔18 مئی (سیاست ڈاٹ کام) مرکزی وزارت داخلہ کے ایک عہدیدار کو آج معطل کردیا گیا جنہیں مالیاتی فوائد کے لئے متعدد غیر سرکاری تنظیموں کو قانون بیرونی عطیات کی وصولی کے تحت بیجا نوٹسیں جاری کرنے کے الزام میں سی بی آئی نے گرفتار کرلیا ہے۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ سی بی آئی کی جانب سے گرفتاری کے لئے انڈر سکریٹری آنند جوشی کو استقدامی اثر کے ساتھ معط ل کردیا گیا۔ مسٹر جوشی گزشتہ ہفتہ اندرا پورم غازی آبادی میں اپنے مکان سے اچانک لاپتہ ہوگئے تھے۔ اتوار کے دن انہیں مغربی دہلی کے علاقہ تلک نگر میں پکڑلیا گیا اور پوچھ تاچھ کے لئے سی بی آئی ہیڈ کوارٹر لایا گیا۔ جوشی اور دیگر نامعلوم افراد کے خلاف بدعنوانیوں میں معلوث اور فارن کنٹربیوشن ریگولیشن ایکٹ کے تحت رجسٹرڈ متعدد این جی اوز کو بیس نوٹس جاری کرنے پر ایک کیس درج کرلیا گیا ہے۔ ان تنظیموں میں سماجی جہدکار تیستا سیتلواد کی تنظیم سب رنگ شامل ہے تاہم جوشی ان الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ ان کے سینئر ایڈیشنل سکریٹری جی کے پرساد نے این جی اوز کو کلین چٹ دینے کے لئے دبائو ڈالا تھا لیکن پرساد نے اس الزام کی تردید کی۔ یہ معاملہ اس وقت منظر عام پر آیا جب وزارت داخلہ سے بعض اہم فائلوں کو غائب ہونے کی تحقیقات سی بی آئی کے سپرد کی گئی۔

TOPPOPULARRECENT