Friday , August 18 2017
Home / Top Stories / وزارت عظمیٰ کے عہدہ کا دعویدار نہیں ہوں ۔ یہ مقدر کی بات ہے

وزارت عظمیٰ کے عہدہ کا دعویدار نہیں ہوں ۔ یہ مقدر کی بات ہے

بی جے پی حکومت کی بیدخلی کیلئے سیکولر طاقتوں میں اتحاد کی ضرورت ۔ پارٹی اجلاس سے نتیش کمار کا خطاب
پٹنہ 23 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) بہار کے چیف منسٹر نتیش کمار نے آج کہا ہے کہ زعفرانی پارٹی کو شکست دینے کے لئے وہ بی جے پی مخالف طاقتوں کو متحد کرنے میں ایک رابطہ کار کا رول ادا کریں گے۔ اگرچیکہ وہ کسی عہدہ کے دعویدار نہیں ہیں لیکن کسی شخص کے مقسوم میں وزیراعظم بننا ہے تو وہ ایک نہ ایک دن وزیراعظم بن کر رہے گا۔ جنتادل متحدہ کی قومی مجلس شوریٰ کے اجلاس جس میں پارٹی کے قومی صدر کی حیثیت سے ان کے انتخاب کی رسمی تصدیق کی گئی ہے، مخاطب کرتے ہوئے مسٹر نتیش کمار نے کہا ہے کہ میں کسی عہدہ کا خواہشمند نہیں ہوں اور میں ہمیشہ بی جے پی مخالف طاقتوں کے اتحاد کے حق میں رہا ہوں اور قیادت کے مسئلہ پر آنے والا وقت ہی فیصلہ کرے گا۔ اگر کسی کے مقدر میں وزیراعظم بننا ہے تو ایک نہ ایک دن بن کر ہی رہے گا چاہے اس کے نام کے چرچے ہوں یا نہ ہوں۔ انھوں نے کہاکہ سب سے پہلے ہمیں بی جے پی کے خلاف متحد ہونے کی ضرورت ہے جس کے لئے ہر ایک کو قربانی دینی پڑے گی۔ اگر لالو پرساد ایک نیک مقصد کے لئے ایثار و قربانی کا مظاہرہ نہ کرتے تو عظیم سیکولر محاذ کی صورت گری نہیں ہوتی۔

واضح رہے کہ چند دن قبل نتیش کمار نے ملک کو آر ایس ایس سے پاک (سنگھ مکت دیش) کرنے کے لئے متحد ہوجانے کی سیاسی جماعتوں سے پرزور اپیل کی تھی اور سال 2019 ء کے عام انتخابات میں بی جے پی کو بیدخل کرنے کے لئے قومی سطح پر بہار کا تجربہ دہرانے کی تجویز پیش کی تھی جس پر یہ قیاس آرائیاں شروع ہوگئیں کہ ایک نئے سیاسی محاذ کی قیادت نتیش کمار کرسکتے ہیں۔ تاہم آج نتیش کمار کی تقریر سے ایسا معلوم ہوتا ہے کہ وزارت عظمیٰ کے عہدہ کی خواہش رکھتے ہیں۔ بار بار نصیب کا حوالہ دیتے ہوئے اپنے آپ کو اہل ثابت کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ انھوں نے کہاکہ اگر کوئی اپنے آپ کو وزارت عظمیٰ کا دعویدار ہے تو اس کا خواب چکنا چور نہیں ہوسکتا۔ مذکورہ اجلاس میں سبکدوش صدر شرد یادو نے اپنے جانشین کے طور پر نتیش کمار کا نام پیش کیا۔ ملک بھر سے شریک 1000 پارٹی مندوبین نے ان کے انتخاب کی تصدیق کردی۔ مرکز میں برسر اقتدار بی جے پی حکومت پر انتخابی وعدوں کو فراموش کردینے اور سماج کو فرقہ وارانہ خطوط پر تقسیم کرنے پر شدید تنقید کرتے ہوئے مسٹر نتیش کمار نے کہاکہ اگر بی جے پی مخالف طاقتوں میں اتحاد قائم ہوجائے تو 2019 ء کے لوک سبھا انتخابات میں اُسے ہرگز کامیابی نہیں ملے گی۔ انھوں نے کہاکہ بہار میں جس طرح گرانڈ سیکولر الائنس کی تشکیل کے ذریعہ بی جے پی کو ذلت آمیز شکست دی گئی اس طرح مرکز میں حکمراں جماعت کو سبق سکھایا جاسکتا ہے۔ نریندر مودی حکومت کی اسٹارٹ اپ انڈیا جیسی ا سکیمات کا مضحکہ اُڑاتے ہوئے نتیش کمار نے کہاکہ ہر روز ایک نیا نعرہ سنائی دے رہا ہے۔ آج اسٹانڈ اپ انڈیا (کھڑے ہوجاؤ) سینٹ ڈاؤن انڈیا (بیٹھ جاؤ) ، لے ڈاؤن انڈیا (لیٹ جاؤ) اور سلیپ فار ایور انڈیا (ہمیشہ کیلئے سوجاؤ) جیسے نعروں کو حقیقت میں تبدیل کردیا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT