Thursday , June 29 2017
Home / سیاسیات / وزیراعظم امیت شاہ کی دھمکی سے خوفزدہ ، کانگریس کا الزام

وزیراعظم امیت شاہ کی دھمکی سے خوفزدہ ، کانگریس کا الزام

مودی حکومت سیاسی فائدہ اُٹھارہی ہے :ڈمپل ،مجسموںپر اکھلیش کا تبصرہ بچکانہ : مایاوتی
نئی دہلی ۔6 مارچ ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیراعظم نریندر مودی لوک سبھا انتخابی حلقہ وارانسی میں تین دن سے اس لئے قیام پذیر ہے کہ وہ امیت شاہ کی دھمکی سے خوفزدہ ہیں کہ ارکان پارلیمنٹ کو جوابدہ قرار دیا جائے گا اگر وہ تین نشستیں حاصل نہ کرسکیں ۔ کانگریس نے آج کہاکہ حکومت پچھلے دروازے سے ’’عوام دشمن ‘‘ فیصلے کررہی ہے تاکہ خانگی افراد کو فائدہ پہونچاسکے ۔ کانگریس نے حکومت کو ’’گورنمنٹ آف انڈیا پرائیویٹ لمیٹیڈ ‘‘ قرار دیا ۔ بھدوہی سے موصولہ اطلاع کے بموجب چیف منسٹر یوپی اکھلیش یادو کی شریک حیات ڈمپل یادو نے آج نریندر مودی حکومت پر تنقید کرتے ہوئے الزام عائد کیا کہ وہ فوج سے سیاسی فائدہ اُٹھا رہی ہے ، جبکہ فوجی سرحد پر شہید ہورہے ہیں ۔ حکومت ان کی شہادت کو بھی سیاسی رنگ دے رہی ہے ۔ ایسی حکومت قبل ازیں کبھی نہیں دیکھی گئی تھی ۔ انھوں نے نوٹوں کی تنسیخ کے اقدام پر بھی حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اس حکومت نے اچھے دن کا تیقن دیا تھا لیکن نوٹوں کی تنسیخ کے ذریعہ عوام کے بُرے دن آگئے ۔ انھیں اپنی سخت محنت سے کمائی ہوئی رقم حاصل کرنے کے لئے بھی بینکوں کے سامنے قطار میں کھڑا ہونا پڑا ۔ ڈمپل یادو قنوج انتخابی حلقہ سے سماج وادی پارٹی کی امیدوار ہیں۔ مودی اور امیت شاہ دونوں پر تنقید کرتے ہوئے انھوں نے کہاکہ دونوں کا کارنامہ صرف یہی ہے کہ وہ جھوٹے وعدے کررہے ہیں ۔ ذرائع ابلاغ اُن کے ان جھوٹے تیقنات کو اُچھال رہے ہیں ۔ کرپشن کے خاتمہ کا تیقن پورا نہیں ہوسکا اور نہ یہ حکومت غیردیانتدار کالا دھن جمع کرنے والے افراد کو گرفتار کرسکی ۔ لکھنو سے موصولہ اطلاع کے بموجب بی ایس پی کی صدر مایاوتی نے آج اکھلیش یادو پر اپنی تنقید کا سلسلہ جاری رکھتے ہوئے کہا کہ ہاتھیوں کے مجسمے کے بارے میں اُن کا تبصرہ بچکانہ ہے ۔ چونکہ ملائم سنگھ یادو ماضی میں وزیر دفاع رہ چکے ہیں اور وہ جب بھی موقع ملے چین کے بارے میں بات چیت کرتے ہیں اور ببوا (اکھلیش یادو ) کے پاس ہاتھیوں کے مجسمے کے علاوہ دوسرا کوئی موضوع نہیں ہے ۔ وہ پتھر والی سرکار کے بارے میں عوام سے کچھ بھی نہیں کہہ سکتے ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT