Monday , August 21 2017
Home / Top Stories / وزیراعظم مودی کا ماضی برطانوی میڈیا نے پھر اُچھالا

وزیراعظم مودی کا ماضی برطانوی میڈیا نے پھر اُچھالا

لندن ، 13 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) برطانوی ذرائع ابلاغ نے آج وزیراعظم نریندر مودی کے دورے کا قابل لحاظ احاطہ کیا لیکن متعدد رپورٹس ہندوستانی لیڈر کے ماضی اور انسانی حقوق کے بارے میں اُن کے ریکارڈ پر تنقیدی نوعیت کی رہیں۔ اہم اخبارات جیسے ’دی گارجین‘، ’دی ٹائمز‘ اور ’دی انڈیپنڈنٹ‘ نے کافی جگہ ان تنازعات کیلئے صرف کی جن کا تعلق مودی، گجرات میں پیش آئے 2002ء کے فسادات جبکہ وہ چیف منسٹر تھے اور برطانوی حکومت کا اُن کے تئیں 2012ء تک رویہ جب اس نے ان کا استقبال کیا۔ ’’سب کچھ درگزر کردیا گیا ہے، مسٹر مودی‘‘ یہ اس تصویر کا کیپشن ہے جو ’ڈیلی ٹیلی گراف‘ میں صفحہ اول پر شائع ہوئی، جبکہ ’ٹائمز‘ کی رپورٹ کچھ اس طرح شروع ہوئی، ’’برطانیہ نریندر مودی کے انسانی حقوق سے متعلق ریکارڈ کے باوجود ہندوستان کے ساتھ مضبوط تر روابط کی بدستور سعی کرتا رہے گا، ڈیوڈ کیمرون نے اس بات پر زور دیا ہے‘‘۔ ’’غیرپسندیدہ مودی کیلئے ہائی سکیورٹی اور کیمرون کی جانب سے اظہار ستائش‘‘ یہ شہ سرخی ’دی گارجین‘ نے لگائی اور اس اخبار نے نامور برطانوی۔ ہندوستانی نقاش انیش کپور کا تنقیدی مضمون بھی شائع کیا ہے۔ گجرات 2002ء کے بعد برطانیہ نے 10 سال تک مودی سے سردمہری برتی تھی۔

TOPPOPULARRECENT