Saturday , August 19 2017
Home / ہندوستان / وزیراعظم کو بیرونی تحفہ 35لاکھ روپئے مالیتی جویلری سیٹ

وزیراعظم کو بیرونی تحفہ 35لاکھ روپئے مالیتی جویلری سیٹ

تحائف دینے والوں کا نام ظاہر کرنے سے وزارت خارجہ کا انکار

نئی دہلی۔23جولائی ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیراعظم نریندر مودی نے یہ اعلان کیا ہیکہ انہیں اب تک انتہائی قیمتی 65 بیرونی تحائف وصول ہوئے ہیں جس میں 35لاکھ روپئے مالیتی ایک جویلری سیٹ شامل ہے ۔ یہ انکشاف وزارت خارجہ کے توشہ خانہ کو موصولہ بیرونی تحائف کی سہ ماہی فہرست میں کیا گیا ہے جہاں پر قیمتی اشیاء محفوظ رکھی جاتی ہے ۔ تاہم نریندر مودی کو پیش کردہ بیرونی تحائف ان کے پیشرو ڈاکٹر منموہن سنگھ کو دیئے گئے تحائف سے زیادہ قیمتی نہیں ہے جبکہ سابق وزیراعظم کو مئی 2005ء میں 43.93لاکھ روپئے مالیتی ایک جویلری سیٹ دیا گیا تھا ۔علاوہ ازیں منموہن سنگھ بیرونی تحائف ایک تلوار کا سیٹ ‘ نایاب قالین ‘ ایک میز کی گھڑی اور ایک قلم مالیتی 20.91 لاکھ توشہ خانہ میں جمع کردیئے ہیں ۔ مملکتی وزیر کامرس صنعت نرملا سیتا رام نے وزیر خارجہ سشما سوراج سے بھی زیادہ 39بیرونی تحائف حاصل کئے ہیں جبکہ سوراج کو صرف 27تحائف پیش کئے گئے ہیں اور نرملا کے انتہائی قیمتی تحفہ میں 15ہزار روپئے مالیتی ایک صندوق میں قالین دیا گیا ہے ۔

تاہم بیرونی تحائف کی فہرست میں وزیر خارجہ تیسرے نمبر پر ہیں جنہوں نے 6لاکھ روپئے مالیتی 2عدد گھڑیاں وصول کی ہیں ۔ وزیراعظم نریندر مودی کے سب سے زیادہ قیمتی تحائف میں ایک نکلس اور کان کی بالیوں پر مشتمل جویلری باکس ہے جسے 7اپریل کو جواہر لال نہرو بھون میں محفوظ کردیا گیا ۔ تاہم یہ تحفہ دینے والے کا نام ظآہر نہیں کیا گیا ۔ وزارت خارجہ وہ سنٹرل انفارمیشن کمیشن کے روبرو یہ استدلال پیش کیا گیا کہ اس طرح کے انکشافات سے دیگر ممالک  کے ساتھ تعلقات متاثر ہوسکتے ہیں ۔ تاہم بیشتر تحائف عموماً خلیجی ممالک بھوٹان سے آئے ہیں ۔ وزیراعظم ‘ مرکزی وزراء اور عہدیداروں کو محصلہ بیرونی تحائف توشہ خانہ میں داخل کردینا پڑتا ہے ۔ اگرچہ اس تحفہ کی قیمت 4ہزار روپئے سے کم ہو تو واپس لیا جاسکتا ہے اور 4ہزار سے زائد ہو تو اضافی قیمت ادا کر کے حاصل کیا جاسکتا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT