Monday , September 25 2017
Home / ہندوستان / وزیرتوانائی کرناٹک کی رہائش گاہ سے 15 کروڑ ضبط

وزیرتوانائی کرناٹک کی رہائش گاہ سے 15 کروڑ ضبط

بھاری مقدار میں زیورات بھی برآمد، محکمہ انکم ٹیکس کے دھاوے جاری
بنگالورو3اگست (سیاست ڈاٹ کام) کرناٹک کے وزیرتوانائی کی رہائش گاہ پر محکمہ انکم ٹیکس کے افسروں کی چھاپہ مار کاروائی آج بھی جاری ہے ۔انکم ٹیکس کے افسران ریاستی وزیر سے پوچھ تاچھ کررہے ہیں۔ڈی کے شیوکمارایگل ٹن ریزارٹ میں قیام پذیرہیں جہاں ان سے پوچھ تاچھ کی جارہی ہے ۔افسروں نے شیوکمار کے 60ٹھکانوں سے 15کروڑ روپئے کی رقم بھی برآمد کی ہے ۔ساتھ ہی ان کی رہائش گاہ سے کئی دستاویزات بھی ضبط کرنے کا دعوی سامنے آنے کی اطلاع ہے ۔ایگل ٹن وہی ریزارٹ ہے جہاں گجرات کانگریس ارکان اسمبلی قیام پذیرہیں اور ڈی کے شیوکماران ارکان اسمبلی کی مہمان نوازی کررہے ہیں۔اسی دوران لوک سبھا میں کانگریس کے لیڈ رملک ارجن کھرگے نے ڈی کے شیوکمار کے خلاف آئی ٹی کے چھاپوں کے دفاع میں حکومت کے بیانات کو گمراہ کن قراردیاہے ۔ان کاکہناتھاکہ وزرا کے تمام وضاحتی بیانات کے باوجود یہ سوال اپنی جگہ برقرارہیکہ شیوکمار کے مکانات پر اسی وقت چھاپہ مارکاروائی کیوں کی گئی ہے ۔ اس بیچ کرناٹک کے کانگریس کارکنوں نے ان چھاپوں کے خلاف آج بھی احتجاج کیا۔کانگریس کارکنان ہاتھوں میں پلے کارڈس تھامے بی جے پی ،امیت شاہ اوروزیراعظم مودی کے خلاف نعرے بازی کررہے ہیں۔ان ہاتھوں میں موجود پلے کارڈس پرامیت شاہ اور مودی کے کارٹونس بنے تھے ۔ یہ وزیر گجرات کانگریس کے 44 ارکان اسمبلی کی بنگلور کی مضافات میں واقع تفریح گاہ پرمیزبانی کے فرائض انجام دے رہے تھے۔ سینئر وزراء نے کہا کہ ان کی رہائش گاہ سے بعض دستاویزات ضبط کرلی گئی ہیں اور ان کا بیان بھی قلمبند کیا جائے گا۔ ارکان اسمبلی کو چند دن قبل ہی کرناٹک کے دارالحکومت لایا گیا تھا۔ انکم ٹیکس کے عہدیداروں نے آج بھی کئی مقامات پر دھاوے کئے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT