Thursday , August 17 2017
Home / Top Stories / وزیرخارجہ مصرکا نایاب دورہ اسرائیل

وزیرخارجہ مصرکا نایاب دورہ اسرائیل

فلسطین ۔ اسرائیل امن مذاکرات اور بحالی اعتماد کی پیشرفت پر غور کا امکان
قاہراہ ۔ 10جولائی ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیر خارجہ مصر سمیع شکری آج اسرائیل کیلئے روانہ ہوگئے ۔ یہ اُن کا ایک نایاب دورہ ہے جس میں ان کی ملاقات وزیراعظم اسرائیل بنجامن نتن یاہو سے ہوگی ۔ ان کے دفتر سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیاہے کہ شکری نتن یاہو سے تفصیلی بات چیت کریں گے جس کی توجہ کا مرکز امن کارروائی کا احیاء ہوگا تاکہ فلسطینیوں کے ساتھ امن بات چیت دوبارہ شروع ہوسکے جو فی الحال معطل ہے ۔ دیگر مسائل میں دونوں قائدین سنگ بنیاد رکھنے اور بحالی اعتماد اقدامات پر بات چیت کریں گے تاکہ فلسطینیوں اور اسرائیلیوں کے درمیان اعتماد بحال ہوسکے اور ایک سازگار ماحول پیدا ہوسکے تاکہ ان کے ساتھ راست بات چیت کا احیاء ہوسکے جس کا مقصد ایک جامع اور منصفانہ حل تلاش کرنا ہوگا ۔ شکری کا دورہ اسرائیل اُن کے 29جون کو مغربی کنارہ کے شہر رملہ کے دورہ کے بعد ہورہا ہے ۔ قبل ازیں صدر مصر عبدالفتح السیسی نے ماہ مئی میں تبصرہ کیا تھا کہ یہ اسرائیل ۔ فلسطین معاہدہ کا ایک حقیقی موقع ہے ۔

جس کے نتیجہ میں اسرائیلیوں اور فلسطینیوں کے درمیان اور مصر اور اسرائیل کے درمیان گرم جوش تعلقات قائم ہوسکتے ہیں ۔ السیسی نے اسرائیلیوں اور فلسطینیوں پر زور دیا تھا کہ وہ اس حقیقی موقع کو ضائع نہ کریں اور خود اپنے ملک کے اسرائیل کے ساتھ امن مذاکرات کی ستائش کی تھی ۔ 1929ء میں مصر پہلا عرب ملک تھا جس نے اسرائیل کے ساتھ امن معاہدہ کیا تھا جب کہ قبل ازیں کئی سال تک دونوں ممالک میں کشیدگی برقرار تھی ۔ مصر اس علاقہ کا اب بھی ایک بارسوخ ملک ہے ۔جون میں 28 عرب اور مغربی ممالک کے نمائندے پیرس میں ملاقات کر کے فلسطین ۔ اسرائیل امن کارروائی کے احیاء پر بات چیت کرچکے ہیں ۔اس اجلاس میں عرب لیگ ‘ یوروپی یونین ‘ اقوام متحدہ نے شرکت کی تھی اور اس بات پر تبادلہ خیال کیا تھا کہ متحدہ بین الاقوامی برادری فلسطین ۔ اسرائیل امن کارروائی کی پیشرفت میں مدد فراہم کرسکتی ہیں ۔ 1967ء کی عرب اسرائیل جنگ کے دوران اسرائیل نے مصر کے لڑاکا طیاروں کو پرواز کرنے سے پہلے ان کے ٹارمک پر ہی حملہ کا نشانہ بناکر ناکارہ کردیاتھا اور مصر کے وسیع علاقہ پر قبضہ کرلیا تھا ‘ تاہم بعدازاں امن مذاکرات اور معاہدہ کے بعد مقبوضہ علاقوں سے دستبرداری اختیار کرلی تھی۔

TOPPOPULARRECENT