Saturday , March 25 2017
Home / شہر کی خبریں / وزیر آبکاری تلنگانہ پدما راؤ گوڑ کے فرزند کے خلاف مقدمہ

وزیر آبکاری تلنگانہ پدما راؤ گوڑ کے فرزند کے خلاف مقدمہ

فٹ پاتھ تاجر پر جان لیوا حملہ اور جان سے مارنے کی دھمکی کا شاخسانہ
حیدرآباد۔15فروری(سیاست نیوز) سیاسی قائدین کے فرزندوں اور بااثر شہریوں کی جانب سے غریب تاجرین کو ہراسانی اور مار پیٹ کے واقعات کوئی نئی بات نہیں ہے لیکن متاثرین اگر ان کے خلاف اٹھ کھڑے ہوں تو ان کی ان ظالمانہ حرکتوں پر روک لگایا جا سکتا ہے۔ ریاستی وزیر آبکاری مسٹر ٹی پدما راؤ گوڑ کے فرزند رامیشور گوڑ کے خلاف مارکٹ پولیس نے مقدمہ درج کیا ہے۔رامیشور گوڑ پر الزام ہے کہ وہ اپنے ساتھیوں کے ہمراہ فٹ پاتھ پر کاروبار کرنے والے موہت پر جان لیوا حملہ کیا اور انہیں جان سے مارنے کی دھمکی دی ہے۔ شکایت کنندہ کی جانب سے فراہم کردہ تفصیلات کے مطابق ریاستی وزیر پدما راؤ گوڑ کے فرزند نے سکندرآباد کے علاقہ میں فٹ پاتھ پر تجارت کے ذریعہ گذر بسر کرنے والے موہت پر اپنے دیگر ساتھیوں کے ہمراہ حملہ کیا اور ان کی جائے تجارت پر پتھراؤ کرتے ہوئے موہت اور اس کے ارکان خاندان کو ہلاک کرنے کی دھمکی دی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ گذشتہ دو شنبہ کو رامیشور گوڑ اپنے دیگر دوستوں کے ہمراہ موہت کے دکان پر پہنچے جہاں وہ اچار کا کاروبار کرتے ہیں اور جھگڑا شروع کردیا ۔ بعد ازاں پدما راؤ گوڑ کے فرزند کے علاوہ ان کے ہمراہ موجود ان کے دوست مدھو ‘ ارون‘ سائی ‘ اروند‘ عمران کے علاوہ 22دیگر نے انہیں روک کر حملہ کیا جس میں موہت زخمی ہوگئے۔ مارکٹ پولیس عہدیداروں کے مطابق موہت کی شکایت پر رامیشور گوڑ کے علاوہ دیگر کے خلاف دفعہ 341‘ 323اور 506کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ موہت نے پولیس میں کی گئی شکایت میں بتایا کہ ریاستی وزیر کے فرزند نے ان پر اور ان کے افراد خاندان پر حملہ کیا ہے اور انہیں جان سے مار دینے کی دھمکی دی ہے۔ موہت نے مزید الزام عائد کیا کہ ریاستی وزیر کے فرزند رامیشور گوڑ ان کی راہ میں رکاوٹیں پیدا کرتے ہوئے ہراساں کر رہے ہیں۔ مارکٹ پولیس انسپکٹر نے بتایا کہ موہت کی شکایت پر مقدمہ درج کرتے ہوئے تحقیقات کا آغاز کردیا گیا ہے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT