Tuesday , October 17 2017
Home / شہر کی خبریں / وقف بورڈ انتخابات کیلئے پہلا پرچہ نامزدگی داخل

وقف بورڈ انتخابات کیلئے پہلا پرچہ نامزدگی داخل

حکومت کی جانب سے بھی تائیدی امیدوار کو میدان میں اتارنے کی اطلاع

حیدرآباد۔24 ڈسمبر (سیاست نیوز) تلنگانہ وقف بورڈ کے انتخابات کے سلسلہ میں متولی اور منیجنگ کمیٹی زمرے میں آج پہلا پرچہ نامزدگی داخل کیا گیا۔ مسجد بی صاحبہ پنجہ گٹہ منیجنگ کمیٹی کے صدر نے آج اپنا پرچہ نامزدگی داخل کیا۔ پرچہ نامزدگی کے ادخال کی آخری تاریخ 27 ڈسمبر ہے۔ اسی دوران تلنگانہ وقف بورڈ کے انتخابات کے دلچسپ ہونے کے امکانات پیدا ہوگئے ہیں کیوں کہ حکومت کی جانب سے بھی متولی اور منیجنگ کمیٹی زمرے میں تائیدی امیدوار کو میدان میں اتارنے کی اطلاعات ملی ہیں۔ بتایاجاتا ہے کہ بورڈ کے ارکان کے سلسلہ میں حکومت اور اس کی حلیف جماعت کے درمیان اتفاق رائے کے لئے مذاکرات باقی ہیں۔ تاہم حکومت متولی اور منیجنگ کمیٹی زمرے میں اپنے ایک امیدوار کو میدان میں اتارنے کا منصوبہ رکھتی ہے۔ اسی دوران حکومت نے ضلع واری سطح پر فہرست رائے دہندگان میں شامل متولیوں اور منیجنگ کمیٹی کے نمائندوں کی تفصیلات طلب کی ہیں۔ بتایا جاتا ہے کہ ایسے کئی متولی وقف بورڈ سے رجوع ہوئے جن کی جانب سے وقف فنڈ ادا کرنے کے باوجود ان کا نام فہرست رائے دہندگان میں شامل نہیں کیا گیا۔ جبکہ کئی ایسے افراد ہیں جنہوں نے صرف 7 ہزار روپئے جمع کرتے ہوئے اپنا نام فہرست میں شامل کرادیا۔ وقف بورڈ کے پاس ایسا کوئی ریکارڈ موجود نہیں ہے جس سے اس بات کا جائزہ لیا جاسکے کہ متولیوں اور منیجنگ کمیٹیوں کی جانب سے گزشتہ چند برسوں میں باقاعدگی سے وقف فنڈ ادا کیا گیا ہو۔ بورڈ میں اس طرح کا ریکارڈ موجود نہیں جس کے باعث حکومت نے بورڈ کی کارکردگی پر ناراضگی ظاہر کی ہے۔ دلچسپ بات تو یہ ہے کہ بورڈ میں علیحدہ الیکشن سیل موجود نہیں۔ گزشتہ مرتبہ بورڈ کے انتخابات کی تفصیلات بھی دستیاب نہیں ہیں۔ بتایا جاتا ہے کہ چیف ایگزیکٹیو آفیسر کو حکومت کی جانب سے ہدایات موصول ہوئی ہیں کہ گزشتہ بورڈ کے انتخابات کی تفصیلات جیسے امیدوار، انہیں محصلہ ووٹ وغیرہ حکومت کو روانہ کئے جائیں۔ اس کے علاوہ بیلٹ پیپر کا نمونہ بھی روانہ کرنے کی ہدایت دی گئی۔ اس بات کی شکایات ملی ہیں کہ کئی وقف انسپکٹرس نے متولیوں سے ملی بھگت کے ذریعہ صرف اس سال کا وقف فنڈ حاصل کرتے ہوئے نام فہرست رائے دہندگان میں شامل کرنے کی سفارش کردی۔ ایسے خاطی وقف انسپکٹرس کے خلاف قانونی چارہ جوئی پر غور کیا جارہا ہے۔ بورڈ کے ذرائع نے بتایا کہ 27 ڈسمبر کو تمام زمرہ جات میں پرچہ جات نامزدگی کے ادخال کے بعد سرگرمیوں میں اضافہ ہوگیا۔

TOPPOPULARRECENT