Saturday , July 22 2017
Home / کھیل کی خبریں / ویراٹ کوہلی اوراشوین کو ٹسٹ درجہ بندی میں نقصان

ویراٹ کوہلی اوراشوین کو ٹسٹ درجہ بندی میں نقصان

جڈیجہ ٹسٹ کے نمبر ون بولر بن گئے ، پجارا دوسرے بہترین بیٹسمین

دوبئی ۔21 مارچ۔(سیاست ڈاٹ کام) رانچی میں آسٹریلیا کے خلاف منعقدہ تیسرے ٹسٹ کے بغیر نتیجہ ختم ہونے کے بعد آئی سی سی کی جانب سے تازہ ترین درجہ بندی جاری کردی گئی ہے جس میں روی چندرن اشوین کو ناقص مظاہروں کی وجہ سے جہاں اپنا پہلا مقام گنوانا پڑا وہیں اس مقابلے میں شاندار مظاہروں کے ذریعہ رویندر جڈیجہ نے پہلا مقام حاصل کرلیا ہے ۔ علاوہ ازیں آسٹریلیا کے خلاف رواں سیریز میں یکے بعد دیگرے ناکام ہورہے ویراٹ کوہلی کو بھی درجہ بندی میں نقصان برداشت کرنا پڑا ہے اور وہ درجہ بندی میں اپنے دوسرے مقام سے نقصان کے بعد چوتھے مقام پر پہونچ چکے ہیں کیونکہ رانچی ٹسٹ میں آسٹریلیا کے خلاف شاندار اور مقابلے کو اپنی ٹیم کے حق میں کرنے والی ڈبل سنچری کی بدولت چتیشور پجارا نے کپتان سے نہ صرف دوسرا مقام حاصل کیا بلکہ کیرئیر میں پہلی مرتبہ وہ درجہ بندی کے اتنے اونچے مقام پر پہنچے ہیں۔ پجارا نے آسٹریلیائی بولروں کے خلاف 525 گیندوں کی صبرآزما اننگز کھیلتے ہوئے 202 رنز بنائے تھے ، جس کی بدولت وہ اب تازہ ترین درجہ بندی میں دوسرے مقام پر پہونچ چکے ہیں جن سے آگے آسٹریلیائی کپتان اسٹیو اسمتھ ہیں۔ پجارا کی یہ کیرئیر میں تیسری ڈبل سنچری رہی جبکہ آسٹریلیا کے خلاف دوسری مرتبہ انھوں نے یہ کارنامہ انجام دیا ہے ۔ 2016-17 کے ہوم سیزن میں انھوں نے تاحال 66.26 کی اوسط سے 1259 رنز اسکور کئے ہیں جس میں چار سنچریاں اور سات نصف سنچریاں شامل ہیں۔ دریں اثناء رانچی ٹسٹ سے قبل جڈیجہ اور اشوین ٹسٹ درجہ بندی میں مشترکہ طورپر پہلے مقام پر فائز تھے لیکن تیسرے ٹسٹ میں اشوین بیٹنگ کیلئے سازگار وکٹ پر مایوس کن مظاہرے کرنے کے بعد جڈیجہ کے خلاف اپنا پہلا مقام گنوا بیٹھے ہیں، کیونکہ جڈیجہ نے اس مقابلے کی پہلی اننگز میں 124 رنز کے عوض 5 وکٹیں اور دوسری اننگز میں 54 رنز کے عوض 4 وکٹوں کا شاندار مظاہرہ کیا ہے ۔ علاوہ ازیں بیٹنگ میں بھی انھوں نے 55 گیندوں میں ناقابل تسخیر 54 رنز کی شاندار اننگز بھی کھیلی جس کی بدولت انھیں درجہ بندی کے نشانات حاصل ہوئے ، جس سے وہ اب ٹسٹ کے واحد نمبرون بولر بن چکے ہیں۔ نیز رواں سیزن جڈیجہ نے 22.98 کی اوسط سے 67 وکٹیں حاصل کی ہیں ، جس میں 24 اننگز کے دوران چار مرتبہ 5 وکٹیں حاصل کرنے کا بھی مظاہرہ شامل ہے۔ نمبر ایک مقام پر اسٹیون اسمتھ اپنی دعویداری کو تیسرے ٹسٹ کے بعد مزید مستحکم کرچکے ہیں ، کیونکہ انھوں نے اس ٹسٹ کی پہلی اننگز میں غیرمفتوح 178 رنز اور دوسری اننگز میں 21 رنز بنائے ہیں جس کی بدولت ان کے درجہ بندی کے جملہ نشانات 941 ہوچکے ہیں ۔ یاد رہے ان سے قبل سب سے زیادہ درجہ بندی کے نشانات حاصل کرنے والوں میں سر ڈان براڈمین 961 ، لین ہٹن 945 ، جیک ہوبس اور رکی پونٹنگ 942 نشانات حاصل کئے ہیں۔ ٹیموں کی درجہ بندی میں ہندوستان اپنا پہلا مقام برقرار رکھنے میں کامیاب ہے اور یکم اپریل کو درجہ بندی کا سیزن ختم ہوگا جس سے اُمید بڑھ چکی ہے کہ ہندوستان کو درجہ بندی کے ایک ملین ڈالر مل جائیں گے ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT