Friday , September 22 2017
Home / شہر کی خبریں / ویزا فیس میں اضافہ پر امریکی حکومت سے مسلسل نمائندگی

ویزا فیس میں اضافہ پر امریکی حکومت سے مسلسل نمائندگی

ڈاک خانوں میں پے منٹ بینکس مارچ 2017ء سے کارکرد ، وزیر مواصلات روی شنکر پرساد کا بیان
حیدرآباد۔ 22 مئی (سیاست ڈاٹ کام) مرکز ہندوستانی سافٹ ویئر پروفیشنلس کی امریکی ویزا فیس میں اضافہ کا مسئلہ اعلیٰ سطح پر اٹھائے گا۔ مرکزی وزیر مواصلات روی شنکر پرساد نے آج ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ جہاں تک H-1B اور L1 ویزا فیس میں اضافہ کا تعلق ہے۔ ہم اعلیٰ سطح پر حکومت امریکہ سے رجوع ہورہے ہیں۔ یہاں تک کہ وزیراعظم نریندر مودی نے صدر امریکہ بارک اوباما سے بات کی۔ خود انہوں نے (روی شنکر پرساد یادو) نے بھی امریکی حکام سے بات کی اور یہ سلسلہ جاری رہے گا۔ انہوں نے کہا کہ وہ صرف ایک بات کہہ سکتے ہیں کہ ہندوستانی کمپنیاں ٹیکس کی شکل میں بے تحاشہ دولت امریکی کمپنیوں کو ادا کررہی ہیں۔ ہماری کمپنیاں تقریباً 500 امریکی کمپنیوں کو بہتر سے بہتر خدمات فراہم کررہی ہیں اور یہ سب سے بہترین وعدہ ہے جو ہم پورا کررہے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ ہندوستانی آئی ٹی کمپنیاں 80 ممالک کے 200 شہروں میں موجود ہیں اور عالمی آؤٹ سورسنگ کے 56% پر ہندوستان کا غلبہ ہے۔ یہ صرف مہارت، انسانی وسائل اور ہندوستانی آئی ٹی پراڈکٹس و کمپنیاں بشمول حیدرآباد کے سبب ممکن ہوسکا ہے۔ مسٹر روی شنکر پرساد محکمہ ڈاک کے زیراہتمام سرکلس کانفرنس کے سربراہان سے خطاب کررہے تھے۔ اس موقع پر انہوں نے محکمہ ڈاک کو 1.30 لاکھ نیٹ ورک سے مربوط آلات فراہم کرنے کا اعلان کیا تاکہ دیہی علاقوں میں پوسٹ مین کو اپنی خدمات انجام دینے میں سہولت ہو۔ ان آلات کے ذریعہ بینکنگ، انشورنس رقمی لین دین اور ڈاک خدمات انجام دی جاسکیں گی۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ملک میں تمام موبائل فون تیار کنندگان کو جنوری 2017ء سے “Panic Button” رکھنا لازمی ہوگا اور یہ خواتین کا تحفظ یقینی بنانے کیلئے ہے۔ اسی طرح جنوری 2018ء سے ہر موبائل فون میں GPS لازمی ہے۔ روی شنکر پرساد نے کہا کہ ہندوستانی ڈاک خانوں کے پے منٹ بینک مارچ 2017ء سے کام کرناش روع کریں گے۔ اس کے ذریعہ تیسرے فریق کے پراڈکٹس اور خدمات کو عوام تک پہنچایا جاسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان میں محکمہ ڈاک کا وسیع تر نیٹ ورک ہے اور حکومت اے ازسرنو مستحکم بنانے کوشاں ہے۔

TOPPOPULARRECENT